دبئی میں دنیا کی نئی بلند ترین عمارت کی تعمیر کا آغاز

دبئی کے حکم راں، شیخ محمد بن راشد المکتوم نے دبئی میں عمارت کی تعمیر کا آغاز کیا ، یہ عمارت کریک ہاربر پر تعمیر کی جائے گی، اس عمارت کو “دی ٹاور” کا نام دیا گیا ہے

حاکم دبئی الشیخ محمد بن راشد آل مکتوم نے کہا کہ آج ہم نے دنیا کی بلند ترین عمارت کا سنگِ بنیاد رکھ دیا ہے ، اس عمارت کی تعمیر انسان کیلئے ایک چیلنج ہوگی، امید ہے کہ اس دوڑ میں دبئی پھر آگے ہوگا۔

نئے برج کی افتتاح تقریب سے خطاب کرتے ہوئے حاکم دبئی الشیخ محمد بن راشد آل مکتوم نے کہا کہ آج ہم نے  نئی بلند ترین عمارت کی تعمیر کا مقصد مستقبل میں مختلف شعبوں میں زیادہ جدت لانا اور معاصر سہولیات سےآراستہ ماحول فراہم کرنا ہے۔

دبئی حکومت کے مطابق اعمار پراپرٹیز اور دبئی ہولڈنگ اس منصوبے پر مل کر کام کریں گے اور اس کا ڈیزائن ہسپانوی نژاد سوئس، سان تیاگو کیلا ٹراوا والز نے تیار کیا ہے، سان تیاگو کیلا ٹراوا نے نیویارک کا ورلڈ ٹریڈ سینٹر پاتھ اسٹیشن کا ڈیزائن بھی بنایا تھا۔

تاہم اس عمارت کی حتمی لمبائی کے بارے میں انکشاف نہیں کیا تھا۔

دبئی سیاحتی اور تفریحی مقاصد کا مرکز بن چکا ہے اور ’برج الخلیفہ‘ جیسی دنیا کی بلند ترین عمارت کا عالمی ریکارڈ رکھتا ہے، جو 828 میٹر طویل ہے، جسے ڈیڑھ ارب ڈالر کی لاگت سے بنایا گیا اور جنوری 2010 میں اس کا افتتاح کیا گیا تھا۔

خیال رہے کہ رواں سال اپریل میں ’اعمار پراپرٹیز‘ نامی تعمیراتی فرم نے اعلان کیا تھا کہ دبئی میں ایک نئی بلند ترین عمارت کی تعمیر کا کام جلد شروع ہوگا، جس پر ایک ارب ڈالر سے زیادہ کی رقم خرچ کی جائے گی۔ اس کا افتتاح 2020ء میں ایکسپو نمائش کے موقع پر کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ متحدہ عرب امارات کے شہر دبئی کو  2020 کے تجارتی عالمی ایکسپو کی میزبانی کے لیے منتخب کیا گیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں

اقوام متحدہ کو کشمیریوں کو بچانے کیلئے آگے آنا ہوگا، شاہ محمود کا یواین سربراہ کو فون

اقوام متحدہ کو کشمیریوں کو بچانے کیلئے آگے آنا ہوگا، شاہ محمود کا یواین سربراہ کو فون

اسلام آباد: بھارت کے زیر قبضہ کشمیر کی موجودہ صورتحال پر وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے