صوبائی, حکومت نے اہم شعبے, میڈیکولیگل ,کو یکسر ,نظراندازرکھا

صوبائی حکومت نے اہم شعبے میڈیکولیگل کو یکسر نظراندازرکھا

کراچی: محکمہ صحت کے ریکارڈ کے مطابق کراچی کے9 سرکاری اسپتالوں میں میڈیکو لیگل شعبے قائم ہیں جہاں مجموعی طور پر 70 میڈیکو لیگل افسران کی تعیناتیوں کی اسامیاں منظورکی گئی تھیں

منظور شدہ اسامیوں میں سے صرف 29 میڈیکل لیگل افسران تعینات ہیں جبکہ41 ایم ایل اوز کی اسامیاں خالی پڑی ہیں اسی طرح کراچی کے صرف 3 اسپتالوں کے میڈیکو لیگل شعبے مکمل فعال ہیں ان میں جناح اسپتال، سول اسپتال اور عباسی شہید اسپتال شامل ہیں۔
کراچی میں جناح اسپتال، سول اسپتال، عباسی اسپتال، سندھ گورنمنٹ اسپتال نیوکراچی، سندھ گورنمنٹ اسپتال لیاقت آباد، سندھ گورنمنٹ اسپتال سعودآباد ، لیاری جنرل اسپتال، سندھ گورنمنٹ قطراسپتال اورنگی ٹاؤن اور سندھ گورنمنٹ کورنگی اسپتال میں میڈیکو لیگل شعبے قائم ہیں۔ میڈیکو لیگل رپورٹ جاری کرنے کے بعد ایم ایل اوز کو متعلقہ عدالت میں جانا ہوتا ہے جس کی وجہ سے سرکاری اسپتالوں میں ایم ایل اوز کی کمی کی شکایت رہتی ہے۔
پولیس سرجن کراچی ڈاکٹر قرار عباسی نےبتایا کہ اس وقت کراچی کے اسپتالوں کے میڈیکو لیگل شعبوں میں 70 ایم ایل اوز کی اسامیاں منظور شدہ ہیں لیکن ان میں سے مختلف اسپتالوں میں 41 ایم ایل اوزکی اسامیاں خالی پڑی ہیں جبکہ پولیس سرجن کراچی کے ماتحت صرف 4 لیڈی ایم ایل اوز ہیں خواتین کے کیسوں کی تصدیق کے لیے شدید پریشانی کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ بیشتر اوقات میں لیڈی ایم ایل او کو گھر سے بلوانے کی درخواست کی جاتی ہے جس کی وجہ سے متاثر ہونے والوںکو بھی ذہنی کوفت کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

سندھ بھر میں کتوں کی بھرمار کے باعث شہریوں کی زندگی کو خطرہ لاحق

سندھ بھر میں کتوں کی بھرمار کے باعث شہریوں کی زندگی کو خطرہ لاحق

کراچی: حکومت سندھ ، محکمہ صحت اور بلدیہ عظمی شہریوں کو بہتر علاج کی سہولیات …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے