بطور پاکستانی ہر دہشت گردی کی مذمت کرتی ہوں

ان خیالات کا اظہار انہوں نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بک پر کیا۔ پاکستانی اداکارہ کا کہنا ہے کہ ’’گزشتہ 5 برسوں سے اداکاری کے پیشے سے وابستہ ہوں اور شوبز میں آنے کے بعد سے میں نے ہمیشہ ملک کی عزت کا خیال رکھتے ہوئے کام کیا

انہوں نے مزید کہاکہ ’’ایک پاکستانی اور فنکار ہونے کی حیثیت سے میں پاکستان اور بیرونی ممالک میں اپنے وطن کا مثبت تشخص اجاگر کرنے کے لیے تمام تر صلاحتیں بروئے کار لانے کے لیے اپنا کردار ادا کرتی رہوں گی‘‘۔

ماہرہ خان کا کہنا ہے کہ ’’میں ایک پاکستانی ہونے کے ناطے دنیا بھر میں ہونے والی ہر دہشت گردی اور اس کے نتیجے میں ہونے والی زیادتی کی مذمت کرتی ہوں ۔اُن کا کہنا تھا کہ ’’مجھے کبھی کسی جنگ یا خونریزی سے خوشی نہیں ملتی تاہم میں ایک ایسی دنیا کا خواب دیکھتی ہوں جہاں ہمارے بچے جنگ اور خون خرابے سے محفوظ رہیں’’۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ادکارہ نے اپنے پرستاروں کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ’’میں اُن تمام لوگوں کی شکر گزار ہوں جنہوں نے میرے کام کو پسند کیا اور میری حمایت کرتے رہے‘‘۔

یاد رہے ماہرہ خان بالی ووڈ فلم رئیس میں کنگ خان کے ساتھ اداکاری کررہی تھیں تاہم اڑی سیکٹر اور لائن آف کنٹرول پر پیدا ہونے والی کشیدگی کے بعد ہندو انتہاء پسندوں کی دھمکیوں کے بعد اداکارہ وطن واپس آگئیں۔

یہ بھی پڑھیں

اداکاری کے باوجود شادی کے لیے سسرال کی شرط پرنوکری کرنی پڑی، نعمان اعجاز

اداکاری کے باوجود شادی کے لیے سسرال کی شرط پرنوکری کرنی پڑی، نعمان اعجاز

کراچی:  مایہ نازاداکارنعمان اعجاز کا کہنا ہے کہ اداکاری کے باوجود شادی کے لیے سسرال کی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے