صدر ٹرمپ کی مسلم خاتون رکن پارلیمنٹ کو ہراساں کرنے کی کوشش

صدر ٹرمپ کی مسلم خاتون رکن پارلیمنٹ کو ہراساں کرنے کی کوشش

واشنگٹن: 

صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ٹویٹر پر امریکی مسلمان رکن پارلیمنٹ الہان عمر کو ہراساں کرنے کی کوشش کی۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی ریاست مینیسوٹا کی ڈیمو کریٹ مسلم رکن کانگریس الہان عمر نے کہا ہے کہ صدر ٹرمپ کی جانب سے متنازع ٹویٹ سے ان کی زندگی کو شدید خطرات لاحق ہو گئے ہیں اور دھمکیاں موصول ہو رہی ہیں۔

اسپیکر نینسی پلوسی سمیت متعدد کانگریس اراکین نے صدرٹرمپ کی ٹویٹ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے اسے مسلمان رکن کانگریس کے خلاف لوگوں کو تشدد پر اکسانے کی کوشش قرار دیا جب کہ پولیس نے بھی الہان عمر  پر ممکنہ حملے کے الزام میں ایک شخص کو حراست میں لیا ہے۔

امریکی صدر نے گزشتہ روز اپنی ایک ٹویٹ میں مسلم رکن پارلیمنٹ کی امریکن اسلامک کونسل میں 11 ستمبر کے حملوں سے متعلق تقریرکا وہ حصہ شیئر کیا جس میں الہان عمر حملے کا تذکرہ کر رہی ہیں۔ امریکی صدر نے ویڈیو کو انتہائی معنی خیز  کیپشن ’ ہم کبھی نہیں بھولیں گے‘ کے ساتھ شیئر کیا جس سے حساسیت بڑھ گئی اور انتہا پسند امریکیوں نے مسلم رکن پارلیمنٹ کو دھمکیاں دیں۔

واضح رہے کہ الہان عمر کانگریس کی پہلی صومالی اور افریقی نژاد مسلم خاتون رکن ہیں جو حال ہی میں وسط مدتی الیکشن میں کامیاب ہوئیں، وہ صدر ٹرمپ کی امیگریشن پالیسیوں کی سرگرم ناقد اور فلسطین میں اسرائیلی جارحیت کیخلاف بھرپور آواز بلند کرنے کے لیے شہرت رکھتی ہیں۔

خواتین کو مسجد میں عبادت کی اجازت، بھارتی سپریم کورٹ نے درخواست پر غور شروع کردیا

یہ بھی پڑھیں

افغان صدر پر چیف ایگزیکٹیو کا الزام

افغان صدر پر چیف ایگزیکٹیو کا الزام

افغانستان کے چیف ایگزیکٹیوعبداللہ عبداللہ نے صدر اشرف غنی پر انتخابی مہم کے دوران سرکاری …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے