لیبیا نیشنل کانفرنس مقررہ وقت پر ہی ہوگی، اقوام متحدہ

لیبیا نیشنل کانفرنس مقررہ وقت پر ہی ہوگی، اقوام متحدہ

نیویارک : اقوام متحدہ کے زیر انتظام لیبیا نیشنل کانفرنس آٹح سال سے جاری تنازعے کے باوجود ملک میں ممکنہ انتخابات کے موقع پر ہی منعقد ہوگی۔

تفصیلات کے مطابق ترقی یافتہ ممالک کے گروپ جی سیون کے رکن ممالک کے وزرائے خارجہ نے لیبیا کی فوج کے کمانڈر خلیفہ حفتر کو خبردار کیا کہ وہ طرابلس پر قبضے سے گریز کریں اور بین الاقوامی طور پر تسلیم شدہ اتحادی حکومت کو قبول کریں۔

جی سیون وزراء خارجہ کا کہنا تھا کہ دوسری صورت میں انہیں بین الاقوامی ردعمل کا سامنا کرنا پڑے گا۔

غیرملکی خبر رساں ادارے کے مطابق گزشتہ روز ایک بیان میں اقوام متحدہ کے ایک اہلکار نے بتایا کہ لیبیا میں جاری آٹھ سالہ مسلح تنازعے کے باوجود لیبیا نیشنل کانفرنس مقررہ وقت پر ہی ہو گی۔

لیبیا کے وزیر اعظم فیاض ال سراج نے جنرل خلیفہ حفتر پر بغاوت کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی فورسز طاقت کا استعمال کررہے ہیں۔

وزیر اعظم کا کہنا ہے کہ باغی دارالحکومت طرابلس کے مضافات میں موجود ہیں، اور وہ طرابلس کا بین الااقوامی ہوائی اڈا بند کرنا چاہتے ہیں۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا ہے کہ طرابلس میں اقوام متحدہ اور عالمی برادری کی حمایت یافتہ حکومت ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ جنرل حفتر کی لیبین نیشنل آرمی (ایل این اے) کی فوجوں نے لیبیا کا جنوب اور اس میں واقع آیل فیکڑی کو رواں بس بند کردیا تھا۔

ایرانی آبدوز میں دھماکے سے 3 اہلکار ہلاک

یہ بھی پڑھیں

امریکی فضائیہ کی غلطی سے افغان فوجیوں پر بمباری، 4 اہلکار ہلاک

امریکی فضائیہ کی غلطی سے افغان فوجیوں پر بمباری، 4 اہلکار ہلاک

کابل:  امریکی فضائیہ نے دہشت گردوں کے خلاف آپریشن میں غلطی سے افغان فوج کی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے