شراپووا پر پابندی کے خلاف اپیل کا فیصلہ متوقع

پانچ مرتبہ گرینڈ سلام جیتنے والی 29 سالہ روسی کھلاڑی ماریہ شراپووا پر ممنوعہ دوا کے استعمال کی وجہ سے پابندی عائد کی گئی تھی۔

رواں برس جنوری میں ان کا آسٹریلین اوپن کے دوران میلڈونیم نامی دوا کا ٹیسٹ مثبت آیا تھا جس کے بعد انٹرنیشنل ٹینس فیڈریشن نے ان پر دو سال کی پابندی لگا دی تھی۔

روس نے اپنی کھلاڑی پر پابندی کے خلاف اپیل کی تھی۔ روس کا مؤقف ہے کہ ماریا یہ دوا صحت کے مسائل کی وجہ سے سنہ 2006 سے استعمال کر رہی ہیں۔

ماریا شراپوا کا کہنا ہے کہ انھوں نے یہ دوا کھیل میں اپنی کارکردگی بڑھانے کے لیے استعمال نہیں کی۔

ثالثی عدالت کاس کا کہنا ہے کہ فیصلے کا اعلان برطانوی وقت کے مطابق دوپہر دو بجے کیا جائے گا۔

خیال رہے کہ مذکورہ دوا پر جنوری 2016 میں پابندی لگائی گئی تھی۔

یہ بھی پڑھیں

گال ٹیسٹ: کین ولیمسن اور سری لنکن اسپنر اکیلا کے بولنگ ایکشن مشکوک قرار

گال ٹیسٹ: کین ولیمسن اور سری لنکن اسپنر اکیلا کے بولنگ ایکشن مشکوک قرار

سری لنکا کے شہر گال میں ٹیسٹ میچ کے دوران آفیشلز نے نیوزی لینڈ کے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے