تعلیمی اداروں, میں چینی, زبان سکھانے, کا فیصلہ

تعلیمی اداروں میں چینی زبان سکھانے کا فیصلہ

اسلام آباد: قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے سمندرپارپاکستانی کا اجلاس چیئرمین شیخ فیاض الدین کی زیر صدارت ہوا،اجلاس میں ایم ڈی او پی ایف نے کمیٹی کو بتایا کہ وزارت سمندر پار پاکستانی نے اپنے زیر انتظام تعلیمی اداروں میں چینی زبان سکھانے کا فیصلہ کیا ہے

کمیٹی کو بتایا کہ پائلٹ پروجیکٹ کے تحت چینی زبان اسلام آباد کے 3 تعلیمی اداروں میں سکھائی جائے گی جس کے لیے الگ سے اساتذہ کا تقرر کیا جائے گا۔
ایم ڈی او پی ایف نے کمیٹی کو مزید بتایا کہ تعلیمی اداروں میں چینی زبان کو لازمی قراردیا جائے گا اورابتدا ہی سے طلبا کو یہ زبان بولنے ، سمجھنے اور لکھنے
کی تربیت دی جائے گی
کمیٹی کو بریفنگ دیتے ہوئے ایم ڈی نے کہا کہ وزارت نے اوورسیز پاکستانیز یوتھ کونسل بنانے کا فیصلہ کیا ہے،بیرون ملک مقیم پاکستانی نوجوانوں کو سال میں ایک بار پاکستان کا دورہ کرایا جائے گا،اور وزیراعظم سے ملاقات بھی کرائی جائے گی۔
او پی ایف حکام نے مزید بتایا کہ سمندرپارپاکستانیوں کی 17 ہزار 793 شکایات موصول ہوئیں جن میں سے 13 ہزار شکایات حل کیگئیں۔
اجلاس میں سیکریٹری سمندر پار پاکستانی نے کمیٹی کو بتایا کہ بڑی تعداد میں پاکستانی بیرون ملک جیلوں میں قید ہیں جن میں سب سے زیادہ تعداد سعودی عرب میں قید پاکستانیوں کی ہے۔

یہ بھی پڑھیں

فریال تالپور کی سندھ اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کو یقینی بنانے کے انتظامات کیے جائیں

فریال تالپور کی سندھ اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کو یقینی بنانے کے انتظامات کیے جائیں

اسلام آباد: سندھ اسمبلی میں ہونے والے اجلاس میں شرکت کی تاہم بدھ کے روز …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے