اقوام متحدہ کا مقبوضہ کشمیر میں ملٹری آبزرور گروپ سے بھارتی عدم تعاون پر اظہار تشویش

نیو یارک: اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل بان کی مون نے مودی سرکار کی جانب سے مقبوضہ کشمیر میں ملٹری آبزور گروپ برائے پاکستان و بھارت کو کام کرنے کی اجازت نہ دینے پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی نے نیویارک میں ایک اعلیٰ سفارتی اجلاس کے دوران بان کی مون پر زور دیا کہ وہ اس بات کو یقینی بنائیں کہ اقوام متحدہ کا آبزرور گروپ مقبوضہ کشمیر کی موجودہ صورت حال پر غیر جانبدار رپورٹ تشکیل دے اور سلامتی کونسل میں پیش کرے۔

بان کی مون نے ملیحہ لودھی سے ملاقات میں افسوس کا اظہار کیا ہے کہ عالمی ادارے کا ملٹری آبزرور گروپ برائے ہندوستان اور پاکستان بھارت کے عدم تعاون کے باعث مقبوضہ کشمیر میں کردار ادا کرنے سے قاصر ہے۔

 اس موقع پر ملیحہ لودھی نے بان کی مون کو سارک سربراہ کانفرنس کے ملتوی ہونے کے حوالے سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ مذاکرات کے لئے ایک بہترین موقع ہوسکتا تھا۔ ملیحہ لودھی نے اجلاس میں بتایا کہ پاکستان زیادہ سے زیادہ تحمل کا مظاہرہ کررہا ہے لیکن کسی بھی قسم کی جارحیت اور اشتعال انگیزی کا بھرپور جواب دے گا۔ انہوں نے کہا کہ حالیہ کشیدگی کی تمام تر ذمہ داری بھارت پر عائد ہوتی ہے۔

اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل نے پاکستان اوربھارت کو کشیدگی ختم کرنے پر زور دیتے ہوئے ایک بار پھر پیش کش کی کہ عالمی تنظیم دونوں ممالک کے درمیان مصالحت کے لئے تیار ہے۔ بان کی مون نے ایل او سی پر بھارتی فورسز کی بلا اشتعال فائرنگ سے 2 پاکستانی فوجیوں کی شہادت پر رنج اور دکھ کا اظہار بھی کیا۔

یہ بھی پڑھیں

پاکستان ایف اے ٹی ایف کی گرے لسٹ میں رہے گا یا اسے کلین چٹ مل جائے گی

پاکستان ایف اے ٹی ایف کی گرے لسٹ میں رہے گا یا اسے کلین چٹ مل جائے گی

بیجنگ : گزشتہ روز بیجنگ میں فنانشل ایکشن ٹاسک فورس نے پاکستان کی جانب سے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے