بھارت یکطرفہ طور پر سندھ طاس معاہدہ ختم نہیں کر سکتا

قومی اسمبلی میں توجہ دلاﺅ نوٹس پر گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ اگر بھارت نے اس معاہدے کی خلاف ورزی کی تو ہم بھی تیاری کر رہے ہیں ،عالمی برداری کو آگاہ اور اعتماد میں لے رہے ہیں ۔ان کا کہناتھا کہ بھارت پانی روک سکتا ہے اور نہ ہی اسے کم کر سکتا ہے ۔سرتاج عزیز نے کہا کہ سند ھ طاس معاہدے کے وقت ورلڈ بینک نے سہولت کاری کا کردار ادا کیا تھا ،اب بھی ورلڈبینک کا کردار نہایت اہم ہے ،اس لیے ابھی تک بھارت سندھ طاس معاہدے کی بڑی خلاف ورزی کا مرتکب نہیں ہوا ۔انہوں نے کہا کہ کشمیر بھارت کا اٹوٹ انگ نہیں ہے ،کشمیر عالمی سطح پر تسلیم شدہ مسئلہ ہے ۔مشیر خارجہ نے کہا کہ بھارتی مداخلت پر تفصیلی ڈوزیئر تیار کر رہے ہیں جو سیکریٹری جنرل اقوام متحدہ اور دیگر ممالک کو بھجوائیں گے ۔ان کا کہنا تھا کہ ڈوزیئر میں افغانستان سے مداخلت کا ذکر بھی کر رہے ہیں

یہ بھی پڑھیں

فریال تالپور کی سندھ اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کو یقینی بنانے کے انتظامات کیے جائیں

فریال تالپور کی سندھ اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کو یقینی بنانے کے انتظامات کیے جائیں

اسلام آباد: سندھ اسمبلی میں ہونے والے اجلاس میں شرکت کی تاہم بدھ کے روز …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے