بوکھلاہٹ کے شکار بھارتی تاجروں نے پاکستان سے تمام آرڈر منسوخ کر دیے

بوکھلاہٹ کے شکار بھارتی تاجروں نے پاکستان سے تمام آرڈر منسوخ کر دیے

نئی دہلی: پلوامہ حملے کے بعد بھارتی حکومت کی جانب سے پاکستان پر لگائے جانے والے الزامات نے بھارتی تاجروں کو بھی بوکھلاہٹ کا شکار کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق پلوامہ حملے کے بعد پاکستان اور بھارت میں کشیدگی کے اثرات کے تحت بوکھلائے ہوئے تاجروں نے پاکستان سے تمام آرڈر منسوخ کر دیے۔

بھارت نے پاکستان سے تمام درآمدات بند کر دی ہیں، پاک بھارت سرحد پر سیمنٹ کے ساڑھے تین سو بڑے ٹرک بھی رک گئے۔

آرڈر منسوخی کی بعد بھارتی تاجروں نے ایڈوانس دیے گئے کروڑں روپے بھی واپس مانگ لیے، گزشتہ دو روز سے پاکستان سے ایک روپے کا مال بھی بھارت نہ جا سکا۔

خیال رہے کہ پاکستان اور بھارت کے تعلقات میں بڑھتی کشیدگی کے باعث دو طرفہ تجارت بری طرح متاثر ہو رہی ہے، جسے بھارتی حکومت کی جانب سے مزید ہوا دی جا رہی ہے۔

موصولہ اطلاعات کے مطابق سوڈا ایش، چمڑا، سالٹ اور کیمیکل کے سیکڑوں ٹرک بھی واہگہ بارڈر پار نہیں جا سکے۔

دوسری طرف بھارتی سرکار نے ایک قدم آگے بڑھتے ہوئے باہمی تجارت کی راہ میں مزید مشکلات پیدا کرنے کے لیے پاکستانی مصنوعات پر 200 فی صد ڈیوٹی بھی عائد کر دی ہے۔

یاد رہے کہ پاکستان سے بھارت کو گزشتہ سال 12 لاکھ میٹرک ٹن سیمنٹ برآمد کیا گیا تھا، ٹرکوں کے علاوہ تقریباً 170کنٹینرز کی بھی پورٹ سے ترسیل نہ ہو سکی۔

یہ بھی پڑھیں

فقط تہران حکومت ہی کے لیے تنبیہ نہیں بلکہ خطے میں امریکی اتحادی ممالک کے لیے یقین دہانی بھی ہے

فقط تہران حکومت ہی کے لیے تنبیہ نہیں بلکہ خطے میں امریکی اتحادی ممالک کے لیے یقین دہانی بھی ہے

واشنگٹن: امریکی قومی سلامتی کے مشیر کا کہنا تھا کہ امریکا کی جانب سے تحمل …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے