امریکہ میں ایمرجنسی کا نفاذ غیر آئینی ہے: کانگریس

امریکہ میں ایمرجنسی کا نفاذ غیر آئینی ہے: کانگریس

امریکی صدر ٹرمپ ایک بار پھر متنازع فیصلہ کرکے خبروں کی زینت بن گئے ہیں۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی کانگریس کے ارکان نے  ایمرجنسی کے نفاذ کو غیر آئینی قرار دیتے ہوئے متنازعہ فیصلے کو قانونی سطح پر چیلنج کرنے کا عندیہ دیا ہے۔ اسپیکر نینسی پلوسی نے کانگریس میں قرارداد لانے اور رائے شماری کرانے کا بھی اعلان کیا ہے۔

واضح رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے ایک اور متنازع اقدام میں میکسیکو سرحد پر حفاظتی دیوار کی تعمیر کے لیے درکار فنڈز پر اپوزیشن جماعت سے تنازع کے بعد ملک بھر میں ایمرجنسی نافذ کردی جس کے باعث صدر ٹرمپ حفاظتی دیوار کے تعمیری فنڈز کے اجراء میں آزاد اور خود مختار ہوجائیں گے۔

امریکی صدر نے میکسیکو کی سرحد پر حفاظتی دیوار کی تعمیر کے لیے 5.7 بلین ڈالر کے فنڈ کا مطالبہ کیا تھا، کانگریس کے انکار پر صدر نے بجٹ دستاویزات پر دستخط نہ کرکے حکومتی شٹر ڈاؤن کی راہ ہموار کردی جس پر کانگریس 1.4 بلین ڈالر کی فراہمی کے لیے رضامند ہوگئی تاہم صدر ٹرمپ نے اس رقم کو ناکافی قرار دیتے ہوئے ملک میں ایمرجنسی نافذ کردی۔

پلوامہ حملے میں بھارتی بارود ہی استعمال ہوا، سابق انڈین جنرل کا انکشاف

یہ بھی پڑھیں

بھارتی سپریم کورٹ کا بابری مسجد شہادت کیس کا فیصلہ 9 ماہ میں سنانے کا حکم

بھارتی سپریم کورٹ کا بابری مسجد شہادت کیس کا فیصلہ 9 ماہ میں سنانے کا حکم

نئی دلی: بھارتی سپریم کورٹ نے سینٹرل بیورو آف انویسٹی گیشن کورٹ کو تاریخی بابری …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے