پسندیدہ ملک‘ کا, درجہ واپس, لینے, کا فیصلہ

پسندیدہ ملک‘ کا درجہ واپس لینے کا فیصلہ

 بھارت: مقبوضہ کشمیر میں حملے کے بعد وزیر اعظم نریندر مودی کی زیر قیادت کابینہ کے اہم اجلاس میں پاکستان سے ’پسندیدہ ملک‘ کا درجہ واپس لینے کا فیصلہ کیا گیا

بھارت نے معاملے کی تحقیقات کیے بغیر اپنی سابقہ رروایات کو برقرار رکھا اور ایک مرتبہ پھر پاکستان پر حملے کی ذمے داری عائد کرتے ہوئے تجارتی سطح پر دیے گئے درجے کو واپس لے لیا۔
بھارتی وزیر خزانہ ارُن جیٹلی نے میڈیا سے گفتگو میں بتایا کہ مودی کابینہ نے پاکستان کو مکمل سفارتی تنہائی کا شکار کرنے کے لیے یہ اقدام اٹھانے کا فیصلہ کیا اور ہم پاکستان کو دیے گئے ’پسندیدہ قوم‘ کے درجے سے دستبردار ہو گئے ہیں۔
ورلڈ ٹریڈ آرگنائزیشن میں اس درجے کا مقصد یہ ہوتا ہے کہ مذکورہ ملک سے کسی بھی قسم کا جاندارانہ رویہ روا نہیں رکھا جائے گا اور سب سے برابر کا برتاؤ کیا جائے گا۔
عالمی تجارتی تنظیم کی ویب سائٹ پر دی گئی تفصیل کے مطابق ہر رکن ملک اپنے ’پسندیدہ ملک‘ کے درجے کے حامل تجارتی پارٹنر سے برابر کا برتاؤ کرتا ہے، اگر کوئی ملک دوسرے ملک سے تعلقات بہتر کرتے ہوئے اسے کوئی فائدہ پہنچاتا ہے تو اس درجے کے تحت اس پر یہ لازم ہے کہ وہ ورلڈ ٹریڈ آرگنائزیشن کے دیگر اراکین سے بھی اسی طرح کا رویہ رکھیں۔

یہ بھی پڑھیں

امریکہ میں فائرنگ کے واقعات، 43 افراد ہلاک و زخمی

امریکہ میں فائرنگ کے واقعات، 43 افراد ہلاک و زخمی

امریکہ میں فائرنگ کے تازہ واقعات میں کم سے کم تینتالیس افراد ہلاک و زخمی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے