روحانی

دہشت گردوں کو کہیں امان نہ دی جائے، صدر ایران کا سوچی اجلاس سے خطاب

صدر ایران ڈاکٹر حسن روحانی نے کہا ہے کہ دہشت گردوں کو صرف شام ہی نہیں، دنیا میں کہیں بھی امان نہیں ملنا چاہیے۔

روس کے شہر سوچی میں سہ فریقی سربراہی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صدر مملکت ڈاکٹر حسن روحانی نے شام میں دہشت گردوں کی مکمل بیخ کنی تک جنگ جاری رکھنے کی ضرورت پر زور دیا۔
صدر ایران نے بیرونی مداخلت کے بغیر شامی دھڑوں کے درمیان ملک میں امن کے قیام کے لیے مذاکرات جاری رکھے جانے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ تمام ممالک کو چاہیے کہ وہ شام کی ارضی سالمیت اور اقتدار اعلی کا پورا پورا احترام کریں۔
انہوں نے عالمی برادری سے اپیل کہ وہ شامی عوام کو امداد پہنچانے اور بے گھر ہونے والوں کی باز آباد کاری اور تعمیر نو کے عمل میں اپنا کردار ادا کریں۔ صدر ایران نے ایک بار پھر یہ بات زور دے کر کہی کہ شامی حکومت کی اجازت کے بغیر امریکہ سمیت آنے والے تمام غیر ملکی فوجیوں کو، شام سے واپس چلے جانا چاہیے۔
انہوں نے شام پر اسرائیل کے خود سرانہ حملوں کو عالمی امن و سلامتی کے لیے انتہائی خطرناک قرار دیتے ہوئے عالمی برادری سے اسرائیل کو لگام دینے کا مطالبہ کیا۔
صدر مملکت ڈاکٹر حسن روحانی نے سوچی اجلاس سے قبل روس کے صدر ولادی میر پوتین کے ساتھ ملاقات اور تہران ماسکو تعلقات کے فروغ کے بارے میں تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔

ایران کے لیے جاسوسی، سابق امریکی فوجی افسرپرغداری کا مقدمہ درج کردیا

 

یہ بھی پڑھیں

طلوع آفتاب سے قبل تین منزلہ رہائشی عمارت گرنے سے کم از کم 10 افراد ہلاک

طلوع آفتاب سے قبل تین منزلہ رہائشی عمارت گرنے سے کم از کم 10 افراد ہلاک

بھارت: بھونڈی کی نگرانی کرنے والے تھانہ سٹی اتھارٹی کے ایک عہدیدار نے اے ایف …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے