افغان طالبان اور امریکا کے مذاکرات اسلام آباد میں ہوں گے، ترجمان افغان طالبان

افغان طالبان اور امریکا کے مذاکرات اسلام آباد میں ہوں گے، ترجمان افغان طالبان

کابل: ترجمان طالبان نے کہا ہے کہ طالبان اور امریکا کے مذاکرات 18 فروری سے اسلام آباد میں ہوں گے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ترجمان افغان طالبان نے کہا ہے کہ افغان طالبان کا وفد وزیراعظم عمران خان سے بھی ملے گا، وزیراعظم عمران خان سے پاک افغان تعلقات اور افغان مہاجرین سے متعلق امور پر بات چیت کی جائے گی۔

واضح رہے کہ افغان طالبان اور امریکا کے درمیان مذاکرات کا پہلا دور پاکستان کی معاونت سے متحدہ عرب امارات میں ہوا تھا جبکہ فریقین کے درمیان مذاکرات کا دوسرا دور قطر کے دارالحکومت دوحہ میں ہوا تھا۔

علاوہ ازیں افغان طالبان اور افغان اپوزیشن جماعتوں کے درمیان مذاکرات کا ایک دور روس کے شہر ماسکو میں بھی ہوچکا ہے۔

یاد رہے کہ افغان طالبان نے افغان صدر اشرف غنی کی شہر میں دفتر کھولنے کی پیش کش مسترد کردی تھی۔

افغان طالبان اور امریکا کے درمیان مذاکرات کا مقصد افغان میں گزشتہ 17 سال سے جاری جنگ کا خاتمہ اور افغانستان سمیت خطے کے دیگر ممالک میں امن و امان کا قیام ہے۔

خیال رہے کہ امریکا نے افغانستان سے اپنی فوج کے انخلاء کا اعلان کیا ہے جبکہ طالبان کی جانب سے ایک بیان میں کہا گیا تھا کہ افغان طالبان افغانستان سے داعش کا چند دنوں میں خاتمہ کرسکتے ہیں۔

افغانستان میں قیام امن کے لیے امریکا کے نمائندہ خصوصی زلمے خلیل زاد نے پاکستان سمیت دیگر ملکوں کا دورہ کیا تھا۔

سابق بھارتی چیف جسٹس مرکنڈے کاٹجو کا ہندو مذہب سے اختلاف سامنے آگیا

یہ بھی پڑھیں

سمندری طوفان ہیگی جاپان کے ساحل سے ٹکرا گیا، ایک شخص ہلاک، متعدد لاپتا

سمندری طوفان ہیگی جاپان کے ساحل سے ٹکرا گیا، ایک شخص ہلاک، متعدد لاپتا

ٹوکیو: سمندری طوفان ہیگی نے جاپان میں تباہی مچادی جس کے نتیجے میں کئی شہروں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے