وینیزویلا کے خلاف کوئی فوجی کارروائی نہیں ہوگی، مادورو

وینیزویلا کے خلاف کوئی فوجی کارروائی نہیں ہوگی، مادورو

وینیزویلا کے قانونی صدر نکولس مادورو نے اپنے ملک کے خلاف فوجی کارروائی کے امکان کو مسترد کردیا ہے۔

رشا ٹوڈے کے مطابق وینیزویلا کے صدر نکولس مادورو نے اپنے خصوصی انٹرویو میں امریکی صدر کی اس دھمکی کے بعد کہ وینیزویلا میں فوجی کارروائی کا آپشن موجود ہے کہا کہ کراکاس کے خلاف کسی بھی طرح کی کوئی فوجی کارروائی نہیں ہوگی۔
مادورونے ساتھ ہی یہ بھی کہا کہ اس کا مطلب یہ نہیں ہے کہ ہم اپنی مقدس سرزمین کے دفاع کے لئے تیار نہ رہیں۔
مادورو نے اسی طرح دنیا کے سربراہوں سے کہا کہ وہ وینیزویلا  کے خلاف ٹرمپ کے اقدامات کو روکیں۔
امریکی صدر ٹرمپ نے تین فروری کو سی بی ایس ٹیلی ویژن چینل سے اپنے انٹرویو میں کہا تھا کہ وہ وینیزویلا میں فوجی مداخلت کرسکتے ہیں۔

پاکستان میں کثیرالقومی بحری امن مشق

یہ بھی پڑھیں

مختلف شہروں میں گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان

مختلف شہروں میں گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان

ریاض: سعودی محکمہ موسمیات نے امکان ظاہر کیا ہے کہ ریاض، مدینہ منورہ، بریدہ، نجران، …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے