اورنگی پائلٹ پروجیکٹ کی, مقتول ڈائریکٹر پروین رحمٰن, کے, قتل کیس, کی, سماعت

اورنگی پائلٹ پروجیکٹ کی مقتول ڈائریکٹر پروین رحمٰن کے قتل کیس کی سماعت

اسلام آباد: جسٹس عظمت سعید کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے تین رکنی بینچ نے معروف سماجی رضاکار اور اورنگی پائلٹ پروجیکٹ کی مقتول ڈائریکٹر پروین رحمٰن کے قتل کیس کی سماعت کی

سماعت میں عدالت کو نئی جے آئی ٹی سے آگاہ کرتے ہوئے ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے نوٹیفکیشن بھی پیش کیا۔
ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے عدالت کو بتایا کہ نوتشکیل شدہ جے آئی ٹی 5 اراکین پر مشتمل ہے جو وفاقی تحقیقاتی ایجنسی کے ڈائریکٹر مظہرالحق کاکا خیل کی سربراہی میں کام کرے گی۔
انہوں نے عدالت کو مزید بتایا کہ اورنگی پائلٹ پروجیکٹ کے اراکین کو موصول ہونے والی دھمکی آمیز کال کو ٹریس کیا جارہا ہے، جس پر ایف آئی اے کی رپورٹ مل چکی ہے جبکہ دیگر اداروں کی رپورٹ کا انتظار ہے۔
جس پر جسٹس عظمت سعید کھوسہ نے ہدایت کی کہ اس سلسلے میں دیگر اداروں کی رپورٹ موصول ہونے کا انتظار کیا جائے۔
انہوں نے تنبیہہ کرتے ہوئے کہ عدالت نو تشکیل شدہ جے آئی ٹی کی کارکردگی کا جائزہ لے گی، سماعت 3 ہفتوں تک کے لیے ملتوی کردی۔
گزشتہ سماعت میں پروین رحمٰن کی ہمشیرہ عقیلہ اسمٰعیل نے عدالت کو آگاہ کیا تھا کہ انہیں اور پروجیکٹ کے موجودہ سربراہ انور راشد کو دھمکی آمیز کالز کی جارہی ہیں۔
جس پر سپریم کورٹ نے وفاقی اور صوبائی حکومت کو پروین رحمٰن کے اہلِ خانہ اور موجود ڈائریکٹر انور راشد کو دھمکیاں دینے والے ذمہ داران کے خلاف کارروائی کرنے کا حکم دیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں

کورونا وائرس کے نئے کیسز سامنے آنے کی شرح میں بدستور اضافہ

کورونا وائرس کے نئے کیسز سامنے آنے کی شرح میں بدستور اضافہ

اسلام آباد: ڈی ایچ او آفس اسلام آباد کی رپورٹ کے گذشتہ روز اسلام آباد …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے