افغان نیشنل آرمی کا وزیرستان کے رہائشی مشران پر تشدد

افغانستان میں رہائش پذیر وزیرستان کے آئی ڈی پیز کے ساتھ ناروا سلوک کئے جانے کا انکشاف ہوا ہے

افغان نیشنل آرمی کی جانب سے واپسی فارم لے جانے والے قبائلی مشران پر تشدد کیا گیا اور بعد ازاں آرمی اہلکاروں نے واپسی فارم ہی جلا ڈالے۔ واضح رہے کہ افغانستان میں شمالی وزیرستان کے سات ہزار 500 خاندان رہائش پذیر ہیں ۔

یہ بھی پڑھیں

حکومت نے ہمیں 29 اگست کو پولیو کے حوالے سے جائزاتی اجلاس میں مدعو نہیں کیا

حکومت نے ہمیں 29 اگست کو پولیو کے حوالے سے جائزاتی اجلاس میں مدعو نہیں کیا

پشاور: پورے صوبے میں ویکسین مہم کا آغاز کرنے کی کوئی تُک نہیں بلکہ ضرورت …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے