مزید, جسمانی ریمانڈ کی, استدعا مسترد

مزید جسمانی ریمانڈ کی استدعا مسترد

لاہور: احتساب عدالت کے جج نجم الحسن بخاری کے رو برو مسلم لیگ (ن)کے رہنماء خواجہ سعد رفیق اور سلمان رفیق کو پیراگون ہاوسنگ اسکینڈل میں 7روزہ جسمانی ریمانڈ پورا ہونے کے بعد پیش کیا گیا

نیب کے وکیل نے عدالت سے استدعا کی کہ ملزمان کا مزید 15روزہ جسمانی ریمانڈ دیا جائے۔
عدالت نے استفسار کیا کہ ریمانڈ میں توسیع کی وجہ بتائیں،جس پر نیب کے وکیل نے بتایا کہ قانون کے تحت عدالت ملزمان کا 90روز تک جسمانی ریمانڈ دے سکتی ہے۔
عدالت نے نیب کی استدعا مسترد کرتے ہوئے ملزمان کو 14روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجواتے ہوئے انہیں دوبارہ 16فروری کو پیش کرنے کا حکم دے دیا۔
خواجہ برادارن کی پیشی کے موقع پر احتساب عدالت کے اطراف پولیس کی بھاری نفری تعینات کی گئی جبکہ رکاوٹیں کھڑی کرکے عدالت آنے والے راستے عام شہریوں کیلئے بند کردیئے گئے۔
خواجہ سعد رفیق کا کہنا تھا کہ یہ پارلیمنٹ اور جمہوریت کی توہین ہے کہ منتخب نمائندے کو قومی اسمبلی کی کارروائی میں شرکت سے روکا جارہا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

حکومت طلال کے ایشو پر پوائنٹ اسکورنگ کررہی ہے

حکومت طلال کے ایشو پر پوائنٹ اسکورنگ کررہی ہے

لاہور: رانا ثنا اللہ نے کہا کہ طلال چوہدری پر شفاف تحقیقات کرکے عوام کو …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے