صدر فرانسس اولاندکی شمالی عراق کی کرد صدرمسعود بارزانی سے ملاقات

ملاقات میں داعش کیخلاف جنگ اور عراق کو فراہم کیے جانے والے اسلحے سے متعلق غور کیا گیا۔یاد رہے کہ صدراولاند نے داعش کے خلاف جنگ میں استعمال کےلئے حکومت عراق کو بھاری اسلحے کی فراہمی کا وعدہ کیا تھا جبکہ فرانسیسی وزیر دفاع یاں ایو لے دریان نے بھی اعلان کیا تھا کہ فرانسیسی دستے عراقی فوج کے لیے بھاری توپوں کی تنصیب میں مدد دیں گے۔ لے دریان نے چارس ڈیگال طیارہ بردار بحری بیڑے کو بھی داعش کے خلاف جنگ کے لیے علاقے میں روانہ کرنے کا اعلان کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں

ایران کو دوبارہ جوہری ڈیل پر قائم رکھا جاسکتا ہے: یورپی یونین

ایران کو دوبارہ جوہری ڈیل پر قائم رکھا جاسکتا ہے: یورپی یونین

برسلز: چیئرمین یورپی یونین برائے خارجہ امور فیڈریکا موروگینی نے کہا ہے کہ ایران کی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے