ناکام بغاوت کے بعد کریک ڈاون کے دوران غلطیاں ہوئیں

جرمن ذرائع ابلاغ کے مطابق وزیراعظم بن علی یلدرم کا کہنا ہے کہ بغاوت کی ناکامی کے بعد سو فیصد درست سمت میں اقدامات نہیں کیے گئے۔ یلدرم نے واضح کیا کہ کریک ڈاو¿ن کے دوران ہونے والی غلطیوں کے تدارک کے لیے مختلف شہروں میں کرائسس سینٹرز قائم کیے جائیں گے، جہاں غلطی سے نشانہ بننے والے افراد کو انصاف مہیا کیا جائے ۔واضح رہے کہ فوجی بغاوت کی ناکامی کے بعد ترک حکومت نے تقریباً ایک لاکھ تیس ہزار حکومتی اہلکاروں کو ملازمتوں سے برخاست کر دیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں

مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے پاک بھارت مذاکرات ضروری ہیں

مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے پاک بھارت مذاکرات ضروری ہیں

نیویارک: سیکریٹری جنرل اقوام متحدہ کا کہنا تھا کہ مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے