کرد انجلینا جولی داعش کے حملے میں ہلاک

رپوٹس کے مطابق خاتون جنگجو آسیہ رمضان منبک کے علاقے داعش کے ساتھ لڑائی میں ہلاک ہوگئی ، یہ علاقہ داعش کے زیرِکنٹرول ہے۔ میں کا تعلق الحسکہ شہر سے ہے، آسیہ نے سال 2014 کے آخر میں شامی کرد عسکری یونٹوں میں شمولیت اختیار کی۔

فیس بک پر کرد فائٹرز کے پیج “وی وانٹ فریڈم فار کردستان” کا پوسٹ میں کہنا تھا کہ آسیہ رمضان جھڑپ کے دوران ماری گئی جبکہ کچھ میڈیا رپورٹس کے مطابق آسیہ رمضان شام کی سیریئن ڈیموکریٹک فورسز اور ترکی کے حمایت یافتہ شامی باغیوں کی لڑائی میں جاں بحق ہوئی۔

آسیہ رمضان کو ہالی ووڈ اداکارہ سے مشابہت کے باعث کرد انجلینا جولی کے نام سے پکارا جاتا تھا، وہ بطور فائٹر خاصی مقبول تھی اور اپنے حملوں میں اس نے داعش کو کافی نقصان پہنچایا

آسیہ رمضان جرابلس شہر کے نواح میں جرابلس عسکری کونسل کے معاونت کے لیے موجود فورسز میں شامل تھی۔

یہ بھی پڑھیں

منامہ کانفرنس کی ناکامی پر امریکا کی جانب سے اعتراف

منامہ کانفرنس کی ناکامی پر امریکا کی جانب سے اعتراف

مغربی ایشیا میں نام نہاد قیام امن کے بارے میں امریکی صدر کے خصوصی ایلچی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے