,لاہور, میں ,شادی ہال, کے, اوقات ,میں, ایک گھنٹے, کا ,اضافہ ,کیا ,جائے,: چیف جسٹس

لاہور میں شادی ہال کے اوقات میں ایک گھنٹے کا اضافہ کیا جائے: چیف جسٹس

لاہور: چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار نے کہا ہے کہ شادی ہالز کے اوقات کار میں ایک گھنٹے اضافہ کیا جائے۔

سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں شادی ہال کے اوقات میں ایک گھنٹہ اضافے سے متعلق چیف جسٹس پاکستان، لارڈ مئیر اور ڈپٹی کمشنر لاہور کے مابین مکالمہ ہوا۔

چیف جسٹس نے دوران سماعت ریمارکس دیئے کہ لارڈ مئیر صاحب آپ شادی ہالوں کے اوقات میں ایک گھنٹے کا اضافہ کیوں نہیں کر دیتے؟

چیف جسٹس نے کہا کہ اِدھر شام 8 سے رات 10 بجے تک شادی ہالوں کا وقت ہوتا ہے اور اُدھر ٹریفک جام ہوتا ہے، خواتین گوٹے والے لباس پہن کر جتن کرتی ہیں اور ٹریفک میں پھنسی رہتی ہیں جب شادی ہال پہنچتے ہیں تو بتیاں بند ہو جاتی ہیں۔

ٹیم ورک کے بغیر پاکستان میں سرمایہ کاری نہیں آسکتی، عمران خان

چیف جسٹس نے کہا کہ شادی کی تقریب کے اوقات میں پیچھے سے ایک گھنٹہ کم اور آگے ایک گھنٹہ بڑھا دیں۔

اس موقع پر میئر لاہور  نے کہا کہ شادی کی تقریب کے اوقات میں تبدیلی کا اختیار بھی ڈی سی لاہور کا ہے جس پر چیف جسٹس نے کہا کہ بیٹا آپ اس پر غور کریں اور شادی ہالوں کے اوقات میں ایک گھنٹہ اضافہ کر دیں۔

یاد رہے کہ لاہور میں شادی ہالز کے اوقات کار رات 10 بجے تک ہیں جس کے بعد ہالز کی لائٹیں بجھادی جاتی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

وزیراعظم عمران خان تو کہتے ہیں ہر معاملے کی رپورٹ پبلک ہونی چاہیے

وزیراعظم عمران خان تو کہتے ہیں ہر معاملے کی رپورٹ پبلک ہونی چاہیے

لاہور: ہائیکورٹ میں پٹرول بحران اور قیمتوں میں اضافہ سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے