عدالت عظمیٰ نے, دوبارہ انصاف, کی فراہمی, کی, امید کا, چراغ روشن کردیا

عدالت عظمیٰ نے دوبارہ انصاف کی فراہمی کی امید کا چراغ روشن کردیا

اسلام آباد: سپریم کورٹ میں سانحہ ماڈل ٹاؤن پر لیے گئے از خود نوٹس کی سماعت کے موقع پر ذرائع ابلاغ سے بات چیت کرتے ہوئے طاہر القادری کا کہنا تھا کہ جے آئی ٹی کے قیام کا فیصلہ کر کے عدالت عظمیٰ نے دوبارہ انصاف کی فراہمی کی امید کا چراغ روشن کردیا

جس 5 رکنی لارجر بینچ نے کیس کی سماعت کی، انہوں نے ماڈل ٹاؤن سانحے میں جاں بحق ہونے والے 17 افراد کے مظلوم، کمزور، بے کس اور مجبور پسماندگان کے چہروں پر خوشیاں لوٹا دی ہیں۔
ان کا کہنا تھا کہ عدالت نے پیغام دے دیا ہے کہ پاکستان میں عدل و انصاف کے چراغ گل نہیں ہوئے، آج بھی کوئی سپریم کورٹ کا دروازہ انصاف کے لیے کھٹکھٹائے تو اسے انصاف مل سکتا ہے۔
ان کا مزید کہنا تھا کہ سپریم کورٹ اور چیف جسٹس نے مسکینوں مظلوموں کے لیے اپنا دروازہ کھول کر اپنا قول پورا کر کے دکھایا ہے۔
طاہر القادری نے مزید کہا کہ میں نے پانچوں ججز کا بہت شکریہ ادا کرتا ہوں کہ انہوں نے سماعت کے دوران میرا موقف بہت محبت، اطمینان اور توجہ سے سنا۔
سربراہ عوامی تحریک نے کہا جے آئی ٹی بنانے کا فیصلہ عدالت نے کیا ہے اور حکومتِ پنجاب نے اس پر اتفاق کرلیا۔
گزشتہ روز سانحہ ماڈل ٹاؤن کیس میں سپریم کورٹ کا 5 رکنی لارجر بینچ تشکیل دیا گیا تھا جس کی سماعت آج ہوئی تھی۔
سپریم کورٹ کے بینچ میں چیف جسٹس میاں ثاقب نثار، جسٹس آصف سعید کھوسہ، جسٹس شیخ عظمت سعید، جسٹس فیصل عرب اور جسٹس مظہر عالم خان میاں خیل پر مشتمل تھے
عدالت عظمیٰ کی جانب سے مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف، قومی اسمبلی کے اپوزیشن لیڈر شہباز شریف، رہنما حمزہ شہباز، رانا ثناء اللّٰہ، چوہدری نثار، خواجہ آصف سمیت 146 افراد کو نوٹسز جاری کیے گئے تھے۔

یہ بھی پڑھیں

بریفنگ, دفتر خارجہ, کے, بجائے پارلیمنٹ میں, دی جائے

بریفنگ دفتر خارجہ کے بجائے پارلیمنٹ میں دی جائے

اسلام آباد: پاکستان پیپلزپارٹی خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ بریفنگ دفتر خارجہ کے بجائے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے