امریکہ سعودی عرب کو ہتھیاروں کی فروخت جاری رکھے گا

امریکہ سعودی عرب کو ہتھیاروں کی فروخت جاری رکھے گا

سعودی عرب سے اپنے مفادات سے متعلق جاری پالیسیوں کے تحت امریہہ اس ملک کو پندرہ ارب ڈالر کے ہتھیار فروخت کرے گا۔

امریکی وزارت خارجہ نے جمعرات کے روز اعلان کیا ہے کہ امریکی اور سعودی حکام نے پیر کے روز ایک معاہدے پر دستخط کئے ہیں جس کی رو سے سعودی عرب، امریکہ سے مختلف قسم کے ہتھیاروں کے ساتھ ساتھ چوالیس تھاڈ میزائل بھی خریدے گا۔

امریکی صدر ٹرمپ اور امریکہ کی اسلحہ ساز کمپنیوں نے مخالف صحافی جمال خاشقجی کے قتل کے بعد بننے والی صورت حال میں بھی سعودی عرب کو ایک سو بیس ارب ڈالر کے ہتھیاروں کی فروخت کے معاہدے کا تحفظ کرنے کی بھرپور کوشش کی ہے۔

امریکہ نے اپنے مفادات کے تحت یمن کے خلاف سعودی جارحیت میں ریاض کی حمایت کی ہے اور جمال خاشقجی کے قتل کیس میں بھی سعودی عرب کے خلاف کوئی موقف اختیار نہیں کیا ہے۔

حالانکہ یمن پر جارحیت میں ہزاروں بے گناہ عام شہری مارے جا چکے ہیں اور جمال خاشقجی کا نہایت بے دردی کے ساتھ قتل کیا گیا ہے۔

عمران خان جمہوری سوچ رکھنے والے نہیں، خورشید شاہ

یہ بھی پڑھیں

انڈیا سے سعودی عرب کے لیے پروازیں کب شروع ہوں گی

انڈیا سے سعودی عرب کے لیے پروازیں کب شروع ہوں گی

ریاض: سعودی عربین ائیر لائن السعودیہ نے مؤثر خروج عودہ ( ایگزٹ ری انٹری) رکھنے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے