مالی میں فرانسیسی فوج سے جھڑپ میں النصرہ کا ڈپٹی کمانڈر ہلاک

مالی میں فرانسیسی فوج سے جھڑپ میں النصرہ کا ڈپٹی کمانڈر ہلاک

بماکو

فرانسیسی فوج کے ایک حملے میں شدت پسند جماعت جماعتہ النصرہ کا مرکزی ڈپٹی کمانڈر مادو الکووفہ مارا گیا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق مالی میں حکومت کے خلاف برسرپیکار شدت پسند مسلح گروہ جماعتہ النصرہ الاسلام والمسلمین کا مرکزی نائب صدر امادو کووفہ فرانسیسی فوج کے وسطی مالی کے علاقے موپتی میں کمانڈو آپریشن کے دوران جھڑپ میں مارا گیا۔

فرانسیسی فوج کے ترجمان نے میڈیا کو بتایا کہ مادو الکووفہ وسطی مالی کے علاقے میں فوجی آپریشن کے دوران شدید زخمی ہو گیا تھا جسے اس کے ساتھی اپنے ہمراہ لے جانے میں کامیاب ہوگئے تھے تاہم کمانڈر زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے راستے میں ہی ہلاک ہوگیا۔

مالی فوج کے ترجمان کرنل ڈیارران نے النصرہ کے ڈپٹی کمانڈر کی ہلاکت کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ کووفہ فرانسیسی فوج کے ساتھ جھڑپ میں شدید زخمی ہونے کے بعد ہلاک ہوگیا، تاہم کمانڈر کی لاش کے حوالے سے کوئی وضاحت نہیں کی گئی۔

جماعت النصرہ مارچ 2017 کو مقامی شدت پسند گروہوں کے اختلاط سے وجود میں آئی تھی جسے القاعدہ کی حمایت بھی حاصل رہی۔ ہلاک ہونے والے ڈپٹی کمانڈر کووفہ ایک معروف مبلغ ہیں اور عیاد ایگ غالی نامی گروہ کے سربراہ تھے، یہ گروہ بعد میں النصرہ میں ضم ہوگیا تھا۔

مودی کے والد کو کوئی نہیں جانتا، اپوزیشن رہنما

یہ بھی پڑھیں

مختلف ملکوں کی جانب سے ٹرمپ کے اعلان کی مذمت

مختلف ملکوں کی جانب سے ٹرمپ کے اعلان کی مذمت

شام کی وزارت خارجہ نے مقبوضہ جولان کی بلندیوں کے بارے میں امریکی صدر کے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے