فرانزک, لیبارٹری قائم کرنے, کا حکم دے, دیا

فرانزک لیبارٹری قائم کرنے کا حکم دے دیا

کراچی:سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں قائم مقام چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں سندھ فرانزک لیب کے قیام کے معاملے پر اجلاس ہوا

اجلاس میں سیکریٹری داخلہ، سیکریٹری صحت، جناح پوسٹ گریجویٹ میڈیکل سینٹر (جے پی ایم سی) کی ایگزیکٹو ڈائریکٹر سیمی جمالی اور جامعہ کراچی کے نمائندے شریک ہوئے
اس دوران جسٹس گلزار احمد نے سندھ میں فرانزک لیب کا قیام نہ ہونے پر سخت برہمی کا اظہار کیا۔
انہوں نے کہا کہ ایک سال کی مدت تھی، ڈیڑھ سال گزر گیا، لیب کیوں نہیں بنائیں، لیب نہ بننے سے کیا مسائل ہیں، کسی کو احساس نہیں۔
جسٹس گلزار احمد نے کہا کہ آپ لوگوں کے پاس تاخیر کا کیا جواز ہے، جس پر سندھ حکومت کے نمائندے نے کہا کہ فنڈز کی تاخیر کے باعث لیب کا قیام نہ ہوسکا۔
سندھ حکومت نے موقف اپنایا کہ لیب کے لیے 27 لاکھ فنڈز جاری کردیے گئے تھے، جس پر سپریم کورٹ نے سندھ حکومت کو 2 ہفتوں کے اندر لیب بنانے کا حکم دیا۔
جسٹس گلزاز احمد نے ریمارکس دیے کہ لیب کے قیام میں مزید تاخیر برداشت نہیں کی جائے گی۔

یہ بھی پڑھیں

خورشید شاہ کو سخت سیکیورٹی میں سکھر کی احتساب عدالت میں پیش

خورشید شاہ کو سخت سیکیورٹی میں سکھر کی احتساب عدالت میں پیش

سکھر: سماعت شروع ہوئی نیب کی جانب سے خورشید شاہ کے15 روزہ جسمانی ریمانڈ کی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے