شیخ حسینہ, کے بارے, میں دکھائی جانے والی فلم, کے نام میں, غلطی, ہو گئی

شیخ حسینہ کے بارے میں دکھائی جانے والی فلم کے نام میں غلطی ہو گئی

بنگلہ دیش: وزیر اعظم شیخ حسینہ کے ایک حمایتی نے اس سینیما پر مقدمہ کرنے کی دھمکی دی جس میں اس کی رہنما کے بارے میں فلم کی نمائش جاری ہے

mo

دراصل سینیما میں شیخ حسینہ کے بارے میں دکھائی جانے والی فلم کے نام میں غلطی ہو گئی جس سے یہ تاثر ملتا ہے کہ وزیراعظم کی ’دُم‘ ہے۔
دارالحکومت ڈھاکہ میں بلاک بسٹر نامی سینیما میں فلم ’حسینہ: اے ڈاٹرز ٹیل‘ (Hasina: A Daughter’s Tale) کی نمائش جاری ہے۔ لیکن تشہیری بورڈ پر ’ٹیل‘ کی املا غلط ہو گئی ہے اور انگریزی میں tale یعنی کہانی کی جگہ tail یعنی دم لکھا گیا۔
شیخ حسینہ کے حمایتی سعد چوہدری نے بلاک بسٹر سینیما سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ غلطی ٹھیک کریں اور معافی مانگیں نہیں تو نو کروڑ ڈالر ہرجانے کا مقدمہ دائر کر دیا جائے گا۔
سعد چوہدری بنگلہ دیش عوامی برٹش لا سٹوڈنٹس یونین کے سابق جنرل سیکریٹری رہے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ انھوں نے قانونی چارہ جوئی کی دھمکی جماعت کی طرف سے نہیں بلکہ ذاتی حیثیت میں دی ہے۔
سعد کے وکیل نوروز چوہدری کا کہنا ہے کہ ان کا مقصد اس غلطی کو جلد سے جلد درست کرنا ہے۔
قانونی نوٹس میں سعد چوہدری نے اپنے آپ کو شیخ حسینہ کا زبردست حامی قرار دیا ہے۔

اس نوٹس کے بعد سینیما مالکان کی جانب سے فلم کی تشہیری مواد میں اس غلطی کی تصحیح بھی کر دی گئی ہے۔
سوشل میڈیا پر یہ موضوع ٹرینڈ کر رہا ہے اور آرا بٹی ہوئی ہیں۔
فیس بک کے صارف مقبول حسین نے لکھا ’میں کیسے رد عمل کا اظہار کروں، ہنسوں یا آنسو بہاؤں؟ کہانی دم بن گئی جو کہ یقیناً ہتک آمیز ہے۔‘
ایک اور صارف ثقلین شمعون نے لکھا ’بھائی یہ محض املا کی غلطی ہے۔ لگتا ہے آپ ایک مچھر کو مارنے کے لیے توپوں کا استعمال کر رہے ہیں۔‘
’حسینہ: اے ڈاٹرز ٹیل‘ شیخ حسینہ کی کہانی ہے جو بنگلہ دیش کے پہلے صدر شیخ مجیب الرحمان کی بیٹی ہیں۔ اس فلم کو ڈھاکہ ٹریبیون اخبار نے دستاویزی ڈراما کہا ہے جس میں کہانی شیخ حسینہ کی بہن شیخ ریحانہ بیان کر رہی ہیں۔
اس فلم کے پریمیر کے بعد وزیر خزانہ عبدالمحیط نے ڈھاکہ ٹریبیون سے بات کرتے ہوئے کہا کہ یہ ایک شاندار فلم ہے اور انھوں نے اس فلم سے بہت کچھ نیا سیکھا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

مشرقی فرانس میں ایک مسجد پر کار سے حملہ

مشرقی فرانس میں ایک مسجد پر کار سے حملہ

فرانس کے مشرقی علاقے کی ایک مسجد پر گاڑی سے حملہ کیا گیا ہے رشاٹوڈے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے