یورپی پارلیمینٹ کا سعودی عرب کو اسلحے کی فروخت بند کرنے کا مطالبہ

یورپی پارلیمینٹ کا سعودی عرب کو اسلحے کی فروخت بند کرنے کا مطالبہ

یورپی پارلیمینٹ کے ارکان نے سعودی عرب کو اسلحے کی فروخت فوری طور پر بند کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

یورپی ارکان پارلیمینٹ کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں یورپی ممالک کی طرف سے یمن کے خلاف جنگ میں سعودی عرب کو اسلحے اور لاجسٹک سپورٹ کی فراہمی پر کڑی نکتہ چینی کی گئی ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ یورپی ممالک کی جانب سے سعودی عرب کو اسلحے کی فراہمی اسلحے کی فروخت سے متعلق یورپی قوانین اور ضابطوں کے منافی ہے۔

بیان کے مطابق سعودی عرب کو یورپی ملکوں کی جانب سے اسلحے کی فروخت نے اسلحے کی تجارت سے متعلق یورپی نظام کو کمزور کر دیا ہے۔

یورپی پارلیمینٹ کے بیان میں کہا گیا ہے کہ سعودی عرب کو بحری جہازوں کی فروخت یمن کا سمندری محاصرہ مذید سخت ہونے کا باعث بنی ہے جبکہ جنگی جہازوں اور بموں کی فروخت نے یمنی عوام کی زندگی اجیرن بنا دی ہے۔

وزیر دفاع کی چیئرمین سینیٹ سے ملاقات، وزیراعظم کا پیغام پہنچایا

یہ بھی پڑھیں

بوکھلاہٹ کے شکار بھارتی تاجروں نے پاکستان سے تمام آرڈر منسوخ کر دیے

بوکھلاہٹ کے شکار بھارتی تاجروں نے پاکستان سے تمام آرڈر منسوخ کر دیے

نئی دہلی: پلوامہ حملے کے بعد بھارتی حکومت کی جانب سے پاکستان پر لگائے جانے والے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے