پیرس: جمال خاشقجی قتل کا معاملہ، ٹرمپ اور اردوان کی ملاقات

پیرس: جمال خاشقجی قتل کا معاملہ، ٹرمپ اور اردوان کی ملاقات

پیرس: سعودی صحافی جمال خاشقجی کے قتل کے بعد عالمی سطح پر سعودی عرب پر دباؤ ڈالنے سے متعلق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے ترک ہم منصب رجب طیب اردوان سے پیرس میں ملاقات کی۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ٹرمپ اور اردوان اپنے فرانسیسی ہم منصب کی دعوت پر پیرس پہنچے جہاں وہ دنیا کے دیگر ممالک کے رہنماؤں کے ساتھ یوم امن سے متعلق تقریب شرکت کریں گے۔

پیرس آنے سے قبل رجب طیب اردوان نے کہا تھا کہ انہوں نے سعودی صحافی کے قتل سے متعلق ریکارڈنگ امریکا، فرانس، جرمنی اور برطانیہ سے شیئر کی ہے، جس کا مقصد ترکی کے اتحادیوں پر مذکورہ تنازع پر ردعمل کے لیے دباؤ ڈالنا ہے۔

واضح رہے کہ ترک صدر طیب اردوان کا کہنا تھا کہ سعودی عرب، جمال خاشقجی کے قاتل سے واقف ہے جو 12 اکتوبر کو 15 افراد پر مشتمل گروپ کے ساتھ کچھ گھنٹوں کے لیے استنبول میں قائم قونصلیٹ آئے تھے۔

یاد رہے کہ گزشتہ بدھ کو ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا تھا کہ ہم آئندہ ہفتے جمال خاشقجی کے حوالے سے سخت موقف پیش کریں گے۔

خیال رہے کہ سعودی عرب اور خاص طور پر ولی عہد پر جمال خاشقجی کے قتل کے حوالے سے اٹھنے والے سوالات پر سخت ردعمل کا مظاہرہ کیا تھا اور خاشقجی پر مختلف نوعیت کے الزامات لگائے تھے۔

سعودی صحافی جمال خاشقجی دو اکتوبر کو استنبول میں سعودی قونصل خانے میں جانے کے بعد سے لاپتہ تھے، ترک حکام نے دعویٰ کیا تھا کہ خاشقجی کو سعودی قونصل خانے میں ہی قتل کرکے ان کی لاش کے ٹکڑے کردئیے گئے ہیں۔

چند روز قبل ترک پراسیکیوٹر جنرل نے دعویٰ کیا ہے کہ سعودی صحافی جمال خاشقجی کو سعودی قونصل خانے میں گلا دبا کر قتل کردیا گیا تھا اور پھر ان کی لاش کو ٹھکانے لگادیا گیا۔

ترکی اور بیلجیئم میں سعودی عرب کے خلاف مظاہر

یہ بھی پڑھیں

مشرقی فرانس میں ایک مسجد پر کار سے حملہ

مشرقی فرانس میں ایک مسجد پر کار سے حملہ

فرانس کے مشرقی علاقے کی ایک مسجد پر گاڑی سے حملہ کیا گیا ہے رشاٹوڈے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے