لشکری رئیسانی, نے, لاپتہ افراد کے معاملے پر ’حقائق, کمیشن‘ کا, مطالبہ

لشکری رئیسانی نے لاپتہ افراد کے معاملے پر ’حقائق کمیشن‘ کا مطالبہ

بلوچستان: یہ بات انہوں نے لاپتہ افراد کے اہلخانہ کے احتجاجی کیمپ سے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہی
انہوں نے حکومت کو لاپتہ افراد کے معاملے کو نہ اٹھانے پر تنقید کا نشانہ بنایا

انہوں نے دعویٰ کیا کہ لاپتہ افراد کو بازیاب کرانے کے لیے کوئی کام نہیں کیا گیا ہے۔
بی این پی-مینگل کے رہنما کا کہنا تھا کہ ’یہ ہماری بدقسمتی ہے کہ بلوچ مائیں اور بہنیں احتجاجی کیمپ میں بیٹھی ہیں اور حکومت معاملے پر کچھ نہیں کر رہی ہے‘۔
ان کا کہنا تھا کہ ’یہ خواتین صرف اتنا جاننا چاہتی ہیں کہ ان کے پیارے کہاں ہیں‘۔
لشکری رئیسانی کا کہنا تھا کہ حقائق کمیشن کو اقوام متحدہ کی سرپرستی میں حقاعق کمیشن قائم کیا جانا چاہیے۔
انہوں نے کہا کہ ’اقوام متحدہ کی نگرانی میں کمیشن کا کام لاپتہ افراد کے حوالے سے معلومات و دیگر تفصیلات اکھٹا کرنا ہونا چاہیے‘۔

یہ بھی پڑھیں

بلوچستان کی تاریخ میں شاید اس سے پہلے اتنی برف باری نہیں ہوئی

بلوچستان کی تاریخ میں شاید اس سے پہلے اتنی برف باری نہیں ہوئی

کوئٹہ: وزیر اعلیٰ بلوچستان نےگفتگو کرتے ہوئے کیا، ان کا کہنا تھا کہ متاثرہ علاقوں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے