ریاست, کی رٹ, کو چیلنج کرنے والوں کو, رعایت نہیں دی, جائے گی

ریاست کی رٹ کو چیلنج کرنے والوں کو رعایت نہیں دی جائے گی

اسلام آباد: سینیٹ میں اظہارِ خیال کرتے ہوئے شہریار آفریدی نے کہا کہ سپریم کورٹ جو بھی فیصلہ دے گی اس کو من و عن نافذ کرنا ریاست کی ذمہ داری ہے

عدالتِ عظمیٰ کے فیصلے کے بعد جو دھرنے ہوئے انہیں حکومت نے احسن انداز میں بغیر کسی خون خرابے کے معاہدہ کرکے ختم کروایا، جس کا سہرا وزیرِ مواصلات، نیشنل ہائی وے اینڈ موٹروے اتھارٹی اور دیگر متعلقہ اداروں کو جاتا ہے۔
وزیرِ مملکت کا کہنا تھا کہ معاہدوں کے باوجود کچھ شرپسند عناصر نے قانون کو ہاتھ میں لیا اور ہنگامہ آرائی کی، میں اس ایوان کو یقین دلانا چاہتا ہوں کہ جنہوں نے قانون کو ہاتھ میں لیا ان میں سے ایک کو بھی معاف نہیں کیا جائے گا بلکہ انہیں عبرت کا نشان بنادیا جائے گا۔
شہریار آفریدی نے بتایا کہ جب جلاؤ گھیراؤ کی ویڈیوز تحریک لبیک کو دکھائی گئیں تو انہوں نے شرپسندوں سے لاتعلقی کا اعلان کردیا۔
انہوں نے کہا کہ تحریک لیبک کے لا تعلقی کے اعلان کے بعد مثالی اقدامات کیے گئے جن میں وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے)، سائبر کرائم، ڈفنس سائبرکرائم، پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے) نے تمام ڈیٹا اور فوٹیجز کو جمع کر لیا ہے۔
ان کا مزید کہنا تھا کہ نیشنل ڈیٹا بیس اینڈ رجسٹریشن اتھارٹی (نادرا) سے شرپسندوں کا ڈیٹا بھی حاصل کرلیا گیا ہے جبکہ ان فوٹیجز کی جیو فینسنگ اور فارنزک جاری ہے۔

یہ بھی پڑھیں

ایرانی وزیر خارجہ, محمد جواد ظریف, آج دو روزہ دورے پر اسلام آباد, پہنچ رہے, ہیں

ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف آج دو روزہ دورے پر اسلام آباد پہنچ رہے ہیں

اسلام آباد: ملاقاتوں میں پاک ایران تعلقات، امریکہ اور ایران کشیدگی اور باہمی دلچسپی کے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے