بادشاہت کو چھوڑ کر, محبت کی خاطر, ایک عام آدمی, سے شادی
Princess Mako (R), the eldest daughter of Prince Akishino and Princess Kiko, and her fiancee Kei Komuro (L), smile during a press conference to announce their engagement at the Akasaka East Residence in Tokyo on September 3, 2017. Emperor Akihito's eldest granddaughter Princess Mako and her fiancé -- a commoner -- announced their engagement on September 3, which will cost the princess her royal status in a move that highlights the male-dominated nature of Japan's monarchy. / AFP / POOL / Shizuo Kambayashi

بادشاہت کو چھوڑ کر محبت کی خاطر ایک عام آدمی سے شادی

27 سالہ آیاکو جاپان کے بادشاہ کے کزن کی بیٹی ہیں، جنہوں نے رواں برس یکم جولائی کو اعلان کیا تھا کہ وہ ایک عام شخص سے شادی کریں گی

ایک عام شخص سے محبت ہوجانے کے بعد شہزادی نے اپنے شاہی خاندان کو مطلع کردیا تھا، جس کے بعد شاہی خاندان نے بھی ان کی محبت کو تسلیم کرلی تھا۔شاہی خاندان نے یکم جولائی کو اعلان کیا تھا کہ27 سالہ شہزادی آیاکو کی منگنی اگست میں کی جائے گی، جس کے بعد ان کی شادی 29 اکتوبر کو کردی جائے گی۔
شہزادی آیاکو نے شپنگ کمپنی میں ملازمت کرنے والے 32 سالہ کائی موریو سے شادی کی، جن سے ان کی محبت اس وقت ہوئی جب شہزادی نے کائی موریو سے اپنے ہی خاندان کی ایک اور شہزادی کے توسط سے 2017 میں ملاقات کی۔
شہزادی آیاکو اور کائی موریو کی شادی ٹوکیو کے میجی شرائن میں جاپانی روایات کے مطابق ہوئی۔
رپورٹ کے مطابق شہزادی کی جانب سے عام شخص سے شادی کیے جانے کے بعد انہیں شاہی اعزازات سے ہاتھ دھونا پڑے گا، کیوں کہ وہ اب وہ شاہی خاندان کا حصہ نہیں رہیں۔
جاپان کے شاہی خاندان کی یہ مسلسل تیسری شہزادی ہیں، جنہوں نے ایک عام شخص سے شادی کی ہے، ان سے قبل 2017 میں بھی شاہی خاندان کی ایک شہزادی نے عام شخص سے شادی کی تھی۔
2 سال قبل جاپانی شہنشاہ اکیتو کی 25 سالہ پوتی شہزادی ماکو نے بھی شاہی حیثیت چھوڑ کر عام شخص سے شادی کی تھی۔

یہ بھی پڑھیں

بوکھلاہٹ کے شکار بھارتی تاجروں نے پاکستان سے تمام آرڈر منسوخ کر دیے

بوکھلاہٹ کے شکار بھارتی تاجروں نے پاکستان سے تمام آرڈر منسوخ کر دیے

نئی دہلی: پلوامہ حملے کے بعد بھارتی حکومت کی جانب سے پاکستان پر لگائے جانے والے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے