کالے شیشے والی کار میں سوار دولہا گرفتار، مقدمہ درج،

دولہے کو گرفتار کر کے تھانے میں بند کر دیا جبکہ رہائی کے لئے رشوت کا مطالبہ کیا گیا، رقم نہ ملنے پر ایف آئی آر درج کر لی گئی۔ معاملہ عدالت میں پہنچنے پر جج نے شدید برہمی کا اظہار کیا۔

رشوت کی رقم نہ دینے پر دولہا شہزاد نے  اپنے گھر کی بجائے پریڈی تھانے میں پوری رات گزاری۔ عدالت نے دولہے کو رہا کرنے اور مقدمہ خارج کرنے کا حکم دیدیا جبکہ  چیف جسٹس نے دفعہ 188 کے تحت ایف آئی آر درج کرنے پر پابندی عائد کر دی۔

یہ بھی پڑھیں

وفاقی حکومت کا اقدام صوبائی خود مختاری پر حملے کے مترادف ہے

وفاقی حکومت کا اقدام صوبائی خود مختاری پر حملے کے مترادف ہے

کراچی: بلاول بھٹو نے کہا کہ وفاقی حکومت عوامی ردعمل سے پہلے اسپتالوں پر اپنا …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے