جسٹس طاہرہ صفدر نے بلوچستان ہائیکورٹ کی پہلی خاتون چیف جسٹس کا حلف اٹھالیا

بلوچستان ہائیکورٹ کی سینیئر جج جسٹس طاہرہ صفدر نے پہلی خاتون چیف جسٹس کا حلف اٹھا لیا۔ جسٹس طاہرہ صفدر کو ملکی تاریخ میں پہلی بار ہائیکورٹ کی چیف جسٹس تعینات ہونے کا اعزاز حاصل ہوگیا۔ چیف جسٹس پاکستان جسٹس ثاقب نثار نے جسٹس طاہرہ صفدر کو ہائیکورٹ کا چیف جسٹس مقرر کیا۔ اس سے قبل بلوچستان ہائیکورٹ کے چیف جسٹس محمد نور مسکانزئی تھے، جو گذشتہ روز 31 اگست کو اپنے عہدے سے ریٹائر ہوگئے۔ جسٹس سیدہ طاہرہ صفدر 5 اکتوبر 1957ء کو کوئٹہ میں پیدا ہوئیں۔ وہ سید امتیاز حسین باقری حنفی کی صاحبزادی ہیں۔

انہوں نے 1980ء میں لا کالج کوئٹہ سے ڈگری حاصل کی اور 1982ء میں پہلی خاتون سول جج بنیں۔ طاہرہ صفدر بلوچستان یونیورسٹی سے اردو ادب میں بھی ماسٹرز کی ڈگری حاصل کرچکی ہیں۔ وہ 1987ء میں سینیئر سول جج، 1991ء میں ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج اور 1996ء میں ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج مقرر ہوئیں۔ اس سے قبل بلوچستان کے چیف جسٹس محمد نور مسکانزئی کے بیرون ملک دورے کے موقع پر جسٹس طاہرہ صفدر، ہائیکورٹ کی قائم مقام چیف جسٹس کے فرائض بھی انجام دے چکی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

صوبے میں کرونا وائرس کی نئی لہر 25 اگست سے شروع ہوئی

صوبے میں کرونا وائرس کی نئی لہر 25 اگست سے شروع ہوئی

کوئٹہ: بلوچستان کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ صوبہ بلوچستان میں گزشتہ 24 گھنٹوں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے