ق لیگ نے حمایت کے بدلے تحریک انصاف سے پنجاب کی وزارت اعلیٰ مانگ لی؟ مونس الٰہی نے اصل حقیقت بتادی

لاہور:گزشتہ روز اطلاعات تھیں کہ مسلم لیگ ق اکثریتی جماعت تحریک انصاف اور مسلم لیگ ن دونوں کیساتھ رابطے میں ہیں اور تحریک انصاف سے حمایت کے بدلے میں وزیراعلیٰ پنجاب یا ڈپٹی وزیراعظم کا عہدہ مانگ لیا لیکن اب پرویز الٰہی کے بیٹے مونس الٰہی میدان میں آگئے اور واضح کیا کہ انہوں نے کسی بھی قسم کا کوئی مطالبہ نہیں کیا۔

ایک خبر پر مونس الٰہی نے تبصرہ کرتے ہوئے لکھا کہ ’ ہم نے ایسا کوئی بھی مطالبہ نہیں کیا، خبریں لگانے سے پہلے ہم سے رابطہ کرلینا چاہیے تھا‘۔

میڈیا کے مطابق مسلم لیگ ق نے تحریک انصاف کا ساتھ دینے کا اعلان کردیا ، ق لیگ کے پاس 8اراکین ہیں جن کی حمایت کے بعد تحریک انصاف کو 139اراکین کی حمایت مل گئی جبکہ حکومت بنانے کے لیے 149اراکین کی ضرورت ہے ۔ رپورٹ کے مطابق پرویز الٰہی آزاد اراکین سے بھی رابطے میں ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

,عمران خان, کے پاس, عوامی مینڈیٹ نہیں

عمران خان کے پاس عوامی مینڈیٹ نہیں

لاہور: سابق وزیراعظم نواز شریف نے کہا کہ (ن) لیگ کے دور میں روپیہ مستحکم …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے