نوازشریف کو شدید نوعیت کی کوئی تکلیف لاحق نہیں، میڈیکل رپورٹ آگئی

اسلام آباد: مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف کے تمام ٹیسٹوں کی لیبارٹری رپورٹ آگئی ہے جس میں کہا گیا ہے کہا انھیں کوئی بھی شدید نوعیت کی تکلیف نہیں ہے۔دنیانیوز کے مطابق نواز شریف کی میڈیکل رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ سابق وزیرِاعظم کے خون اور پیشاب کے ٹیسٹ نارمل ہیں، تاہم ان کے خون میں یوریا کی مقدار معمول سے تھوڑی زیادہ ہے۔میڈیکل رپورٹ میں نواز شریف کو نرم غذا، پرسکون ماحول اور سابقہ ادویات جاری رکھنے کا مشورہ دیتے ہوئے کہا گیا ہے کہ ان کا ذاتی معالج کو بھی ان کی دیکھ بھال جاری رکھنے کی ہدایت کی گئی ہے ۔تمام ٹیسٹوں کی رپورٹ آنے کے بعد مریض کا دوبارہ معائنہ کیا جائے گا۔ نواز شریف کے خون کے مزید ٹیسٹ اور ایکو کارڈیالوجی کل ہو گی۔واضح رہے کہ میڈیکل بورڈ نے اڈیالہ جیل میں نواز شریف کا طبی معائنہ کرنے کے بعد انھیں فی الحال کہیں اور منتقل نہ کرنے کا مشورہ دیا تھا۔ جیل ذرائع کے مطابق نواز شریف کو جیل میں ہی طبی امداد دینے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے ۔

یہ بھی پڑھیں

جیل میں صرف جیل مینوئل کے مطابق سہولیات فراہم کی جارہی ہیں

جیل میں صرف جیل مینوئل کے مطابق سہولیات فراہم کی جارہی ہیں

راولپنڈی: مہناز سعید کا مزید کہنا تھا کہ جیل میں انہیں غیر قانونی سہولیات فراہم …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے