منی لانڈرنگ کیس، آصف زرداری کے قریبی ساتھی حسین لوائی کا جسمانی ریمانڈ منظور

کراچی: جوڈیشل مجسٹریٹ کی عدالت نے گزشتہ روز گرفتار کئے جانے والے معروف بینکر حسین لوائی اور محمد طحہٰ کا جسمانی ریمانڈ منظور کرلیا۔ایف آئی اے نے گزشتہ روز نجی بینک کے سربراہ اور آصف زرداری کے قریبی ساتھی حسین لوائی کو منی لانڈرنگ کیس میں بیان ریکارڈ کرانے کےلئے طلب کیا جہاں انہیں باقاعدہ گرفتار کرلیا گیا۔ایف آئی اے حکام ملزم حسین لوائی اور شریک ملزم محمد طحہٰ کو سخت سیکیورٹی میں کراچی کی سٹی کورٹ لائے جہاں انہیں جوڈیشل مجسٹریٹ جنوبی کی عدالت میں پیش کیا گیا۔حسین لوائی کی جانب سے شوکت حیات ایڈووکیٹ نے اپنا وکالت نامہ عدالت میں جمع کرایا۔ایف آئی اے نے کہا کہ ملزمان نے 7 ارب کی منی لاڈرنگ کی،4 ارب ریکورکرلئے ہیں،ایف آئی اے حکام نے ملزمان کے جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی جس کی مخالفت کرتے ہوئے ملزمان کے وکیل نے کہا کہ حسین لوائی بینک کے صدر ہیں، اکاؤنٹس آپریٹ کرناروٹین ہے،پہلی انکوائری 3 سال پہلے بندہوگئی تھی، حسین لوائی کو ایف آئی اے نے متعدد نوٹسز جاری کیے، انہوں نے اپنا بیان قلمبند کرادیا ہے اور ایف آئی اے پہلے بھی بیان لے چکا ہے، اس لیے مزید کسی ریمانڈ کی ضرورت نہیں۔ایف آئی اے حکام نے عدالت کو بتایا کہ حسین لوائی نے طلحہٰ کے نام پراکاؤنٹ کھولا، حسین لوائی کےخلاف جعلی اور گمنامی اکاؤنٹس کی تحقیقات جاری ہیں اور حوالے سے مزید تفصیلات درکار ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

آئندہ چند روز گرمی شدت میں اضافے کا امکان ہے

آئندہ چند روز گرمی شدت میں اضافے کا امکان ہے

کراچی: چیف میٹرولوجسٹ نے کراچی میں تین روز تک موسم شدید گرم رہنے کی پیش …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے