بھارتی اداکاراؤں کو جسم فروشی کے لیے امریکا بھیجنے کا انکشاف، بولی وڈ میں طوفان برپا ہوگیا

بھارتی فلم انڈسٹری میں کام کرنے والی اداکاراؤں کو جسم فروشی کے مذموم دھندے میں استعمال کرنے کے لیے امریکا بھیجے جانے کا انکشاف ہوا ہے جس پر شکاگو پولیس نے تیلگو فلموں کے ایک پروڈیوسر کو حراست میں لے لیا۔بھارتی میڈیا کے مطابق بالی ووڈ میں ایک منظم گروہ فلم انڈسٹری میں کام کرنے کی خواہش مند اداکاراؤں کو بہلا پھسلا کر امریکا روانہ کردیتا ہے جہاں ان اداکاراؤں سے جسم فروشی کا مکروہ دھندہ کروایا جاتا ہے۔ اس حوالے سے شکاگو پولیس نے خفیہ اطلاعات پر کارروائی کرتے ہوئے ایک بھارتی گروہ کو حراست میں لے لیا۔ گرفتار ہونے والوں میں تیلگو فلموں کے ایک پروڈیوسر بھی شامل ہیں۔بھارت سے امریکا بھیجے جانے والی اداکاراؤں میں سے زیادہ تر کا تعلق تیلگو فلم انڈسٹری سے ہے۔ ان اداکاراؤں کو ثقافتی پروگرامز اور کانفرنسز کی آڑ میں امریکا منتقل کیا جاتا ہے۔ جسم فروشی کے لیے اداکاراؤں کو استعمال کرنے کے مکروہ دھندے میں مبینہ طور تیلگو فلم انڈسٹری کے ایک معروف پروڈیوسر بھی شامل ہیں۔واضح رہے کہ شکاگو پولیس نے جسم فروشی کے مذموم دھندے میں بھارتی فلم انڈسٹری کے ملوث ہونے کے شواہد ملنے پر بھارتی حکومت سے رابطہ کیا تھا لیکن خاطر خواہ جواب نہ ملنے کے باعث شکاگو پولیس نے اپنے ملکی قانون کے تحت کارروائی کرتے ہوئے تیلگو فلموں کے پروڈیوسر سمیت گروہ کے دیگر ارکان کو گرفتار کرلیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

نورا فتیحی کی ’دلبر‘ میں شاندار پرفارمنس لیکن……

ممبئی:مراکشی نژاد بالی ووڈ ڈانسر نورا فتیحی نے گزشتہ برس اگست میں ریلیز ہونے والی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے