دیت میں مبالغہ خون ریزی کا ذریعہ بن سکتا ہے

سعودی عر ب کے مفتی اعظم الشیخ عبدالعزیز آل الشیخ نے دیت کی رقوم میں مبالغے سے خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ امر خون ریزی کو عام کر دینے اور انسانی خون کی حرمت ختم کردینے کا ذریعہ بن سکتا ہے۔

ایک شخص نے اپنے قریبی عزیز کے لیے مطلوب دیت کی رقم میں زکوةٰ کی رقم استعمال کرنے سے متعلق سوال کے جواب میں مفتی اعظم کا کہنا تھا کہ میں اس  چیز پر اعانت کی نصیحت نہیں کروں گا۔ اندیشہ ہے کہ یہ امر بعض لوگوں کے یہاں خون ریزی کو عام کر دینے اور انسانی خون کو حقیر کر دینے کا ذریعہ بن جائے گا

یہ بھی پڑھیں

کیرالہ میں متحدہ عرب امارات کے قونصل خانے کے نام پارسل سے 30 کلو سونا برآمد

کیرالہ میں متحدہ عرب امارات کے قونصل خانے کے نام پارسل سے 30 کلو سونا برآمد

انڈیا: جنوبی ریاست کیرالہ کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر موجود کسٹم حکام نے باتھ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے