اسرائیلی فوج نے عہد تمیمی کے رشتہ دار کو میڈیا اور امدادی کارکنوں کے سامنے سفاکی سے شہید کردیا

مقبوضہ مغربی کنارے میں اسرائیلی فوج نے عہد تمیمی کے رشتہ دار کو گولیاں مار کر شہید کردیا۔خبررساں ادارے کے مطابق مغربی کنارے کے قصبے نبی صالح میں اسرائیلی فوج نے سنگ باری کے الزام میں 21 سالہ نوجوان کو گرفتار کرنے کے لیے گھر پر چھاپا مارا اور اس دوران نہتے فلسطینی کو شہید کردیا۔ رپورٹس کے مطابق ازدان تمیمی کو اسرائیلی جیل میں قید 18 سالہ عہد تمیمی کے گھر کے قریب فائرنگ کا نشانہ بنایا گیا۔فلسطینی سماجی رکن نے میڈیا کو بتایا کہ ازدان تمیمی نامی نوجوان کو اسرائیلی فوج نے کچھ فاصلے سے گردن میں تین گولیاں ماریں جس سے وہ شدید زخمی ہوا اور فوجیوں کے حصار میں ہی دم توڑ گیا جب کہ اس دوران امدادی ٹیمیں بھی وہاں موجود تھیں۔دوسری جانب اسرائیلی فوج نے دعویٰ کیا ہے کہ نوجوان کو دورانِ کارروائی پتھراؤ کرنے پر گولیاں ماری گئیں جب کہ نوجوان کو زخمی ہونے کے بعد پوری طبی امداد دی گئی تاہم وہ جانبرنہ ہوسکا۔

یہ بھی پڑھیں

شام میں بڑے پیمانے پر جاری فوجی آپریشن ختم کرنے کا امریکی مطالبہ مسترد

شام میں بڑے پیمانے پر جاری فوجی آپریشن ختم کرنے کا امریکی مطالبہ مسترد

انقرہ: صدر رجب طیب اردوان نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو واضح جواب دیتے ہوئے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے