قندیل کا قتل غیرت کے نام پر نہیں ہوا

قندیل بلوچ کا قتل غیرت کے نام پر نہیں ہوا۔ اس میں کوئی اور بھی بات ہے جو تفتیش کے بعد معلوم ہوگی

کسی کے قتل کے بعد ایک بلیم گیم شروع ہوجاتی ہے۔ابھی اس کیس کی کئی باتوں سے پردہ اٹھے گاجو اتنا آسان کام نہیں۔ اگر ان کے گھر میں کوئی لڑائی تھی تو ہمسایوں کو پتہ لگتا ۔اگر وہ اپنے گھر میں رہ رہی تھی تو اس کے گھر والوں سے تعلقات اچھے ہی تھے ۔ ان کا کہنا تھا کہ ایک دم اس کے گھر والوں سے تعلقات خراب ہونے کی باتیں سامنے آنے لگی ہیں جو قابل تعجب ہے۔ان کا کہنا تھا کہ غیرت کے نام پر کسی کو قتل کرنا اچھی بات نہیں۔ اگر عورتوں نے عزت کے نام ایسے کام شروع کر دیئے تو نام نہاد مرد کہاں جائیں گے۔ایک سوال کے جواب پر انہوں نے کہا کہ میں نے اس کو کہا تھا کہ اپنے کام پر دھیان دو غلط کاموں پر نہ جاولیکن اگر کسی نے کوئی کام کرنا ہو تو وہ کیسے رک سکتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

بزرگ شہریوں کے لیے خصوصی پروگرام شروع کیے ہیں

بزرگ شہریوں کے لیے خصوصی پروگرام شروع کیے ہیں

لاہور: وزیر اعلیٰ کا کہنا تھا کہ بزرگوں کا احساس کرنا اور خیال رکھنا ہمارا …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے