سفاک شخص 14 سالہ لڑکی کو برہنہ کرکے پشاور کے گلی کوچوں میں گھماتا رہا

بچوں کی لڑائی میں درندہ صفت ملزم نے 14 سالہ لڑکی کو تشدد کے بعد کپڑے پھاڑ کر گلیوں میں گھمایا، پولیس 3 دن بعد بھی مرکزی ملزم کو گرفتار نہ کر سکی۔ تفصیلات کے مطابق پشاور کے علاقے ہشت نگری میں بچوں کی لڑائی میں ملزم نے بچی کے کپڑے پھاڑ ڈالے اور اسے نیم برہنہ حالت میں علاقے میں گھماتا رہا۔ بچی کی والدہ کا کہنا ہے کہ میں اپنے بھائی کے گھر سے آ رہی تھی کہ مظہر پیچھے سے آیا اور میری بیٹی کی چادر پھاڑی اور کپڑے بھی پھاڑ ڈالے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ مجھے انصاف چاہیئے۔ اس حوالے سے پولیس افسر نے بتایا کہ فریقین آپس میں رشتہ دار ہیں، لڑائی کے بعد دونوں کی جانب سے پولیس میں رپورٹ درج کرائی گئی تھی، جس کے بعد مظہر نامی شخص نے ان کی بچی کے ساتھ شرمناک سلوک کیا، بڑوں کی لڑائی میں بچی سے انتقام لیا گیا، ہم نے 2 ملزمان کو پکڑ لیا ہے تاہم مرکزی ملزم تاحال مفرور ہے۔ یاد رہے کہ واقعے کو 3 روز گزر گئے ہیں لیکن تاحال پولیس ملزم کو پکڑنے میں ناکام ہے۔

یہ بھی پڑھیں

باراتیوں کی, گاڑی گزشتہ, شام کو, سیلابی ریلے میں, بہہ گئی

باراتیوں کی گاڑی گزشتہ شام کو سیلابی ریلے میں بہہ گئی

جنوبی وزیرستان: ڈی سی وانا امیر نواز نے بتایا کہ باراتیوں کی گاڑی گزشتہ شام …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے