سعودی عرب میں اس شخصیت کا سرقلم کرکے سب سے اونچے درخت پر لٹکانے پر50لاکھ روپے انعام کا اعلان

بھارت کی ہندوانتہاءپسند خاتون رہنماءنے سعودی عرب میں موجود مذہبی سکالر ڈاکٹر ذاکر نائیک کا سرقلم کرنے اور اسے سب سے اونچے درخت پر لٹکانے والے کے لیے 50لاکھ روپے انعام کا اعلان کردیاجس کے بعد مسلمانوں کی بے چینی میں مزید اضافہ ہوگیا

ہندوفسادی رہنماءسدھوی پراچی سنسنی خیزبیانات کی وجہ سے خبروں میںرہتی ہیں اور جمعرات کو بھی انہوں نے کہاکہ” ڈاکٹرذاکرنائیک دہشتگردی پھیلانے میں ملزم قرارپائے اور وہ شخص جوان کا سرقلم کرے ،سب سے بڑے درخت سے لٹکائے تو صلے میں مجھ سے پچاس لاکھ روپے وصول کرسکتاہے ‘۔

انڈیا کو بتایاکہ کوئی بھی شخص جو سعود ی عرب جائے ، ذاکرنائیک کاسرقلم کرے اورریاست کے سب سے اونچے درخت پر لٹکادے تو انعام لے لے ۔انعام کا اعلان کرنے کی وجہ سے متعلق سوال کے جواب میں پراچی کاکہناتھاکہ مذہبی شخصیت ہونے کے لبادے میں ذاکرنائیک دہشتگردی پھیلارہاہے ، وہ ایک دہشتگرد ہے جو دہشتگردوں کی حمایت کرتاہے ، اس شخص کی وجہ سے مذہبی شخصیات کا تاثر خراب ہوا اور اسے سزاملنی چاہیے ، کسی بھی صورت میں اسے معافی نہیں ملنی چاہیے ، وہ صرف ایک مذہبی مبلغ نہیں بلکہ ایک ایسا شخص ہے جو دوسروں کو غلط راستے پرلگارہاہے ‘۔
انتہاءپسند رہنماءکاکہناتھاکہ اور بھی کئی لوگ اسی طرح کے کام کررہے ہیں ، ان لوگوں کو فوری گرفتار کرکے پوچھ گچھ کرنے کی ضرورت ہے ، اسی طرح مدارس کی بھی مکمل چھان بین کی ضرورت ہے جو دہشتگردی پھیلانے میں مدد دیتے ہیں۔پراچی نے یہ بھی دعویٰ کیاکہ اسے بیرون ملک سے دھمکی آمیزکالز موصول ہورہی ہیں اوراُنہیں ختم کرنے کی دھمکیاں دی جارہی ہیںجس پر اُنہوں نے پولیس سے بھی رابطہ کیاہے ۔

یہ بھی پڑھیں

بھارتی ریاست ہماچل پردیش میں مسافر بس کھائی میں جا گری، 32 افراد ہلاک

بھارتی ریاست ہماچل پردیش میں مسافر بس کھائی میں جا گری، 32 افراد ہلاک

ہما چل پردیش: بھارت کی شمالی ریاست ہماچل پردیش میں مسافروں سے بھری بس کھائی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے