4 اضلاع کی حلقہ بندیاں کالعدم قرار دے دی گئیں

اسلام آباد ہائی کورٹ نے ملک کے 4 اضلاع کی حلقہ بندیاں کالعدم قرار دے دیں جبکہ 4 اضلاع کی حلقہ بندیوں سے متعلق فیصلہ محفوظ کرلیا۔ تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ میں حلقہ بندیوں کے خلاف جسٹس عامر فاروق نے درخواستوں پر فیصلہ سنا دیا۔ عدالتی فیصلے میں ملک بھر کے 4 اضلاع کی حلقہ بندیاں کالعدم قرار دیتے ہوئے الیکشن کمیشن کو ازسر نو قواعد کے مطابق اضلاع میں حلقہ بندیاں کرنے کا حکم دیا گیا ہے جبکہ نئی حلقہ بندیاں کرتے ہوئے ہر نشست پر آبادی کا تناسب مدنظر رکھنے کی ہدایت بھی کی گئی ہے۔
جن علاقوں کی حلقہ بندیاں کالعدم قرار دی گئیں ان میں جھنگ، جہلم، ٹوبہ ٹیک سنگھ اور لوئر دیر شامل ہیں جبکہ بہاولپور، رحیم یار خان، چکوال اور بٹگرام کی حلقہ بندیوں پر فیصلہ محفوظ کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ حلقہ بندیوں کے خلاف اسلام آباد ہائی کورٹ میں 108 درخواستیں زیرسماعت ہیں جن میں سے ہائی کورٹ نے 40 سے زائد درخواستوں پر فیصلہ سنایا۔

یہ بھی پڑھیں

افغانستان کو عالمی دہشت گردی کا محرک نہ بننے دینے کی ضمانت

افغانستان کو عالمی دہشت گردی کا محرک نہ بننے دینے کی ضمانت

پشاور: قطر کے دارالحکومت دوحہ میں امریکا کے ساتھ ہونے والے مذاکرات کے نویں دور …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے