مقبوضہ کشمیر میں ریاستی دہشتگری ، چوبیس گھنٹے میں 9 شہادتیں

مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی ریاستی دہشتگردی جاری، سرچ آپریشن کے نام پر مزید پانچ نوجوانوں کو شہید کر دیا، چوبیس گھنٹے میں شہادتوں کی تعداد نو ہو گئی.وادی میں مکمل ہڑتال کی جا رہی ہے، مقبوضہ وادی ایک بار پھر خون رنگ ہوگئی۔ چوبیس گھنٹوں میں بھارتی قابض فوج نے نو نوجوانوں کو شہید کر ڈالا جس کے خلاف وادی میں شٹر ڈائون ہڑتال کی جا رہی ہے۔ کشمیر میڈیا کے مطابق ضلع شوپیاں کے علاقے بٹ گام میں بھارتی قابض فوج نے ایک بار پھر محاصرے اور تلاشی کی آڑ میں پانچ نوجوانوں کو شہید کر ڈالا، آج شہید ہونے والوں میں پروفیسر ڈاکٹر رفیق بٹ، صدام احمد پدھر، بلال احمد مہند، عادل ملک اور توصیف احمد شیخ شامل ہیں۔کل چھتہ بل کے علاقے میں قابض فوجیوں کے ہاتھوں چار نوجوان شہید ہوئے تھے، نوجوانوں کی قابض فورسز کے ہاتھوں شہادت کے خلاف حریت رہنمائوں کی کال پر وادی میں شٹر ڈائون ہڑتال کی جا رہی ہے، بھارتی میڈیا کے مطابق سرینگر میں سڑکوں پر پولیس کے ساتھ فوجی بھی گشت کر رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

کشمیر میں شہریوں کوحق, خودارادیت, نہ دینے پر, آج, یوم سیاہ منایا, جا رہا ہے

کشمیر میں شہریوں کوحق خودارادیت نہ دینے پر آج یوم سیاہ منایا جا رہا ہے

سری نگر: مقبوضہ کشمیر پر بھارت کے غاصبانہ قبضے کے خلاف کنٹرول لائن کے اطراف …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے