Bilawal Bhutto Zardari, chairman of the Pakistan People's Party, waves to supporters during a rally in Karachi, Pakistan, Sunday, Oct. 16, 2016. The rally marked the ninth anniversary of the devastating bomb attack that hit Benazir Bhutto's homecoming parade in Karachi on October 18, 2007, killing more than 100 people, mostly Pakistan People's Party workers, in the deadliest single terror attack on Pakistani soil. (AP Photo/Fareed Khan)

ہم صوفی ازم کے ماننے والے ہیں لیکن سیاست کو پیری مریدی سے الگ کرنا ہوگا، بلاول بھٹو

سانگھڑ: پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کہتے ہیں کہ جب بھی نواز شریف اقتدار میں ہوتے ہیں، عوام کو پیاسا رکھتے ہیں، لاہور میں پھول تو اگ جاتے ہیں، لیکن عوام کو پینے کا پانی نہیں ملتا۔ تفصیلات کے مطابق سانگھڑ میں تقریب سے خطاب کے دوران بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ عوام کے بنیادی مسائل تعلیم، صحت، روزگار اور صاف پانی ہیں، عوام کو اس سے کوئی غرض نہیں کہ کسی کو کیوں نکالا گیا، وہ خوشحالی، روزگار، روٹی، کپڑا اور مکان چاہتے ہیں، مسلم لیگ (ن) اور ان کے اتحادی ہوں یا تحریک انصاف، ان نام نہاد پارٹیوں نے صرف گالی اور الزامات کی سیاست کی، ان کے پاس عوام کے مسائل کے حل کیلئے نا تو کوئی منشور ہے اور نا ہی صلاحیت۔

انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) کی ملک دشمن پالیسی کی وجہ سے امیر امیر تر اور غریب غریب تر ہو رہاہے، لیکن ہم نے غربت کم کرنے کیلئے غریب خواتین کو کاروبار کیلئے قرضے دیئے۔ بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ جب بھی نواز شریف اقتدار میں ہوتے ہیں، عوام کو پیاسا رکھتے ہیں، لاہور میں پھول تو اگ جاتے ہیں، لیکن عوام کو پینے کا پانی نہیں ملتا، پورا ملک پانی کی کمی کا شکار ہے، لیکن سندھ سب سے زیادہ متاثر ہے، ارسا سندھ کو اپنے حصے کا پانی نہیں دے رہا اور اس کے حق کیلئے ترسا رہا ہے، ہم صوفی ازم کے ماننے والے ہیں، لیکن ہمیں سیاست کو پیری مریدی سے الگ کرنا ہوگا۔

یہ بھی پڑھیں

ساحلی علاقے صوبائی حکومت کے زیر انتظام لانے کا فیصلہ

ساحلی علاقے صوبائی حکومت کے زیر انتظام لانے کا فیصلہ

کراچی: قانونی مسودے کی سندھ اسمبلی سے منظوری کے بعد کراچی کے تمام ساحل سندھ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے