روس افغان طالبان کو ہتھیار فراہم کر رہا ہے، امریکا

کابل: افغانستان میں تعینات امریکی فوج کے کمانڈر جنرل جان نکولسن نے روس پر الزام عائد کیا ہے کہ وہ افغان طالبان کو ہتھیار فراہم کررہا ہے۔برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کو دیئے گئے انٹرویو میں جنرل جان نکولسن نے کہا کہ روس نا صرف طالبان کی مدد کررہا ہے بلکہ انہیں اسلحہ بھی فراہم کر رہا ہے۔ یہ ہتھیار تاجکستان کی سرحد سے اسمگل کئے جارہے ہیں تاہم وہ اس کی تعداد نہیں بتا سکتے۔ یہ کہنا مشکل ہے کہ روس طالبان کو کتنی مدد فراہم کر رہا ہے۔جنرل جان نکولسن نے کہا کہ تاجکستان کے ساتھ افغان سرحد پر مشقوں کا ایک سلسلہ شروع کیا ہے۔ بظاہر یہ انسداد دہشت گردی کی مشقیں ہیں لیکن ہم اس حوالے سے پہلے بھی روس کا یہ طریقہ دیکھ چکے ہیں، جس کے تحت پہلے وہ بڑے پیمانے پر سازو سامان لے جاتے ہیں اور پھر اس میں سے کچھ سامان پیچھے رہ جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس طالبان کی ایسی کہانیاں موجود ہیں جو میڈیا میں شائع ہوئی ہیں جن میں کہا گیا ہے کہ دشمن نے ان کی مالی مدد کی۔ ہمارے پاس ہتھیار ہیں جو ہمیں افغان رہنماؤں نے دیے ہیں، ہمیں معلوم ہے اس میں روسی ملوث ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

مغربی ایشیا میں امریکہ کی جانب سے کشیدگی پیدا کرنے پر روس کی تنقید

مغربی ایشیا میں امریکہ کی جانب سے کشیدگی پیدا کرنے پر روس کی تنقید

روس کی وزارت خارجہ کی ترجمان نے مغربی ایشیا میں امریکہ کے کشیدگی پیداکرنے والے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے