احتساب عدالت نے واجد ضیاء کے بیان سے متعلق متفرق درخواست نمٹا دی

اسلام آباد: احتساب عدالت نے جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیاء کے بیان سے متعلق متفرق درخواست نمٹا دی۔ عدالت کا کہنا ہے کہ واجد ضیاء ملزمان کے معصوم یا قصور وار ہونے کی رائے نہیں دے سکتے۔ احتساب عدالت کا کہنا ہے کہ جے آئی ٹی رپورٹ میں سپریم کورٹ کے سوالوں کا جواب دیا گیا ہے۔

واجد ضیاء اپنے بیان میں جو کہنا چاہیں اسے سنیں گے۔ ان کی بات پتھر پر لکیر نہیں، واجد ضیاء کے فراہم کردہ مواد کو عدالتی ریکارڈ کا حصہ بنایا جائے گا، ان دستاویزات پر فیصلہ عدالت نے کرنا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

تاجروں و صنعتکاروں کا دباو اور ردعمل کام دکھا گیا

تاجروں و صنعتکاروں کا دباو اور ردعمل کام دکھا گیا

اسلام آباد: ایف بی آر نے انکم ٹیکس افسران کو کاروباری یونٹس و کاروباری مراکز …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے