اجے اور الیانا ڈی کروز کی ’ریڈ ‘ کے چرچے

بولی وڈ ایکشن ہیرو اجے دیوگن کی حقیقی کہانی پر مبنی ایکشن تھرلر فلم ’ریڈ‘ نے پہلے ہی دن ریکارڈ کمائی کرکے دیگر فلموں کے لیے خطری کی گھنٹی بجادی۔ خیال رہے کہ ’ریڈ‘ کی کہانی کا خیال بھارتی ریاست اتر پردیش کے دارالحکومت لکھنؤ کے ایک ایماندار ٹیکس افسر کی کہانی سے متاثر ہوکر لکھی گئی ہے۔

لکھنؤ میں 1981 میں ایک ایماندار ٹیکس افسر نے کالے دھن کا کاروبار کرنے اور ٹیکس چوری کرنے والے بااثر افراد کے محلات پر چھاپے مارکر نہ صرف اپنی ذمہ داریاں نبھائی تھیں، بلکہ انہوں نے ان پیسوں سے اپنی ریاست کی غربت ختم کرنے میں بھی کردار ادا کیا۔

فلم میں کوئی بھی مصالحہ یا آئٹم نمبر شامل نہیں کیا گیا، بلکہ فلم کے ڈائلاگ جاندار لکھے گئے ہیں، جس وجہ سے فلم نے پہلے ہی دن ریکارڈ کمائی کی۔

بولی وڈ تجزیہ نگار ترن آدرش نے ٹوئیٹ کی کہ ’ریڈ‘ نے پہلے ہی 10 کروڑ 40 لاکھ روپے کماکر نہایت ہی اچھا آغاز کیا۔

ان کے مطابق ’ریڈ‘ کے رات کے شوز بھی بک ہیں، جب کہ خیال کیا جا رہا ہے کہ فلم 17 اور 18 مارچ کو ریکارڈ کمائی کرکے 30 کروڑ روپے سے زائد کمائی کرنے میں کامیاب جائے گی۔

خیال رہے کہ فلم کو 16 مارچ کو بھارت سمیت مختلف ممالک میں پیش کیا گیا۔

’ریڈ‘ کے جاندار ڈائلاگ رتیش شاہ نے لکھے ہیں، جب کہ ان ڈائلاگس کو حقیقت کا ایکشن تھرلر روپ دینے کی ذمہ داریاں ڈائریکٹر راج کمار گپتا نے نبھائی ہیں۔

اجے دیوگن فلم میں ایسے ٹیکس افسر کا کردار میں نظر آئے ہیں، جن کا ان کی ایمانداری کے باعث 49 بارتبادلہ کیا جاتا ہے، تاہم وہ کالا دھن کرنے والے افراد کو یہ کہتے نظر آتے ہیں کہ وہ تب تک ایمانداری سے کام کرتے رہیں گے، جب تک ان کا 50 ویں بار تبادلہ نہیں ہوجاتا۔

ناقدین کی جانب سے فلم کے ڈائلاگس کو کافی سراہا جا رہا ہے۔

فلم میں بولڈ اداکارہ الیانا ڈی کروز نے اجے دیوگن کی بہادر بیوی کا کردار نبھایا ہے، جس وجہ سے ان کے بھارت بھر میں چرچے ہیں۔

الیانا ڈی کروز اور اجے دیوگن کی یہ مسلسل ایک ساتھ دوسری فلم ہے، اس سے قبل وہ 2017 کے آخر میں ’بادشاہو‘ میں ایک ساتھ نظر آئے تھے۔

’ریڈ‘ کو ایک ایسے موقع پر نمائش کے لیے پیش کیا گیا ہے، جب کسی اور بڑے فلمی اداکار کی فلم سینما گھروں کی زینت نہیں بنی، اس لیے امکان ہے کہ فلم 100 کروڑ کلب میں شامل ہوجائے گی۔

یہ بھی پڑھیں

محکمہ جنگلی حیات کی رابی پیر زادہ کیخلاف کارروائی

لاہور: گلوکارہ رابی پیرزادہ کو گھر میں اژدھے، مگرمچھ اور سانپ رکھنا مہنگا پڑ گیا۔ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے