فلم ’’شور شرابا‘‘ میں بلو کا کردار میرا فنی سفر نئی سمت میں لے کر جائے گا، میرا

اسلام آباد /لاہور: فلم اسٹارمیرا نے کہا ہے کہ فلم ’شورشرابا ‘ میں میرا ’’بلو‘‘ کا کردارمیرے فنی سفر کو ایک نئی سمت میں آگے لے کرجائے گا۔ اخبار سے گفتگوکرتے ہوئے میرا نے کہا کہ میری پہچان پاکستان فلم انڈسٹری سے ہے اور اپنے فنی سفرکے دوران بہت سے یادگارکردارنبھائے۔ لیکن اب ’بلو‘ کا کردارشائقین کو عرصہ تک یاد رہے گا۔ یہ ایک ایسا کردارثابت ہوگا کہ جس کے بعد میرے خلاف پراپیگنڈہ کرنے والے اورلابی سسٹم کے تحت کام پانے والے بھی ایسے کرداروں کی تلاش کریں گے۔

میرا نے کہا کہ فلمساز سہیل خان اوربھارتی ہدایتکارحسنین حیدرآباد والہ نے جب مجھے اس فلم کیلیے رابطہ کیاتوان کا کہنا تھا کہ ہمیں اس فلم میں کوئی سپراسٹارنہیں بلکہ ایک ایسی اداکارہ سے کام لینا ہے، جو اس کردارکوہمیشہ کیلیے امرکردے۔ بطوراداکارہ یہ کسی بھی فنکارکیلیے بہت بڑا چیلنج ہوتا ہے۔ اس لیے میں خود کوخوش قسمت سمجھتی ہوں کہ اس کردارکیلیے میراانتخاب کیا گیا۔

اداکارہ نے بتایا کہ انہوں نے ڈائریکٹرکی ہدایت کے مطابق بڑی محنت اورلگن کے ساتھ اس کردارکونبھایا ہے اورمجھے امید ہے کہ جب فلم بین سینما گھروں میں اس فلم کودیکھیں گے توان کے اداس چہروں پرمسکراہٹ ہوگی۔

ایک سوال کے جواب میں اداکارہ میرا نے کہا کہ موجودہ دور میں پاکستان فلم انڈسٹری ایک نئی منزل کی جانب گامزن ہے اوراچھی فلمیں پروڈیوس کی جارہی ہیں لیکن ان فلموں کو کامیابی کا وہ گریڈ نہیں مل پارہا ہے، جس کوہم سپرہٹ قراردیتے ہیں۔ یہ نوجوان فلم میکرز کیلیے ایک سوالیہ نشان بن چکا ہے۔ اس کے جواب تلاش کرنے کیلیے انھیں بہت سا کام کرنے کی ضرورت ہے۔
میرا نے کہا کہ جولوگ اس سوال پرغورکرتے ہوئے آئندہ عوام کی دلچسپی کومدنظررکھتے ہوئے کہانی، میوزک اورکاسٹ پرتوجہ دینگے، وہی سپرہٹ فلمیں بنا پائیں گے۔ وگرنہ فلمیں توبنتی رہیں گی لیکن ان کی کامیابی اورمنافع بخش کاروبار کاتناسب نہ ہونے کے برابر رہے گا۔

یہ بھی پڑھیں

محکمہ جنگلی حیات کی رابی پیر زادہ کیخلاف کارروائی

لاہور: گلوکارہ رابی پیرزادہ کو گھر میں اژدھے، مگرمچھ اور سانپ رکھنا مہنگا پڑ گیا۔ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے